قومی احتساب بیورو ان افراد کی بھی چھان بین کریں، سوشل میڈیا پر اہم شخصیات کی لسٹ جاری۔

سکردو(ڈسٹرک رپورٹر) قومی احتساب بیورو کی جانب سے گلگت بلتستان میں کرپٹ عناصر کی گرفتاریوں کے بعد سوشل میڈیا پر مزید اہم حکومتی شخصیات کے لسٹ جاری کردئے۔ تفصیلات کے مطابق سوشل میڈیا ایک پوسٹ مسلسل وائرل ہورہا ہے جس میں دعوی کیا ہے کہ گزشتہ الیکشن کے بعد موجودہ حکومت کے کئی اہم شخصیات نے غیرقانونی طریقے سے کروڑوں کے مال جائیداد بنائے ہیں جنکا احتساب ضروری ہے۔ اُنہوں نے سوال اُٹھایا ہے کہ کئی سیاست دانوں نے کڑوڑوں کے اثاثے بنائے ہیں نیب ان پرکب ہاتھ ڈالنے کی ہمت کرے گا۔رپورٹ کے مطابق وزیر اعلی حفیظ الرحمن کی طرز زندگی بلکل بدل گئے ہیں اُنہوں نے ٹمبر سے لیکر نوکریوں کے کے معاملات میں اپنے سگے بھائی اور فرنٹ مین امیر اعظم کو آگے رکھا ہوا ہے اور مختصر عرصے میں کروڑوں کے جائنداد بنائے ہیں،  اسی طرح حاجی اکبر تابان کا پیٹرول پمپ الیکشن کے دنوں میں فروخت کر دیا تھا جسے وزارت حاصل ہونے کے بعد واپس خریدلیا اور مزید اثاثے بنائے ہیں، کونسل الیکشن تک کاچو امتیاز اپنے خاندان سے قرضہ لے کر جیب خرچ پورا کرتے تھے اور گاڑی میں فیول ڈالنے نیز نفسیاتی گولی کھانے کے پیسے بھی نہیں ہوتے تھے اب ڈبل سٹوری گھر بھی بنایا نئی گاڑی بھی لی اور چلاس کے ایم سی بی سے اُن کے اکاونٹ میں نوے لاکھ منتقل ہوئے ہیں۔ اسی طرح اسی مہینے میں عمران ندیم کو بھی اسی ماڈل اور رنگ کی گاڑی ملتی ہے۔ عمران ندیم تو ایک عرصے سے قومی وسائل لوٹ رہے ہیں لیکن کاچو کے غیر فطری اثاثے کیا غیر قانونی نہیں۔ ان کے علاوہ ویمن سیکنڈل کا مرکزی کردار اقبال حسن نے حال ہی میں سکردو ریڈیو پاکستان چوک کے ساتھ لاکھوں مالیت کی زمین خریدی ہے۔ ان کے پاس پیسے کہاں سے آگئے۔ اسی طرح خفیہ اداروں کے پاس مزید اطلاعات ہونگیں کہ کون کون سے اراکین اسمبلی اس وقت کروڑ پتی بن چکے ہیں اور ٹھیکوں سے کمیشن لیتا ہے اور دیگر غیرقانونی کام کرتا ہے۔عوام کو نظر آنے والی دولت کی ریل پیل نیب کو نظر نہ آنا لمحہ فکریہ ہے۔ اراکین اسمبلی جس بھی پارٹی سے ہو آمدنی سے زیادہ دولت بنانے والوں کا احتساب ضرور ہونا چاہیے۔ یہ عمل نیب کا تھا لیکن شاید نیب کی ترجیحات میں شاید نہ ہو۔

About TNN-GB

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc