گلگت بلتستان میں مسلسل لوڈشیڈنگ پیپلزپارٹی کے رہنما مسلم لیگ نون پر پھٹ پڑے۔

گلگت(چیف رپورٹر) مسلم لیگ ن کی غلط پالیسیز کی وجہ سے اج گلگت بلتستان اندھیرے میں ڈوبا ہوا ہے ۔جی بی کی تاریخ میں 20گھنٹے کی طویل ترین لوڈ شیڈنگ کے دوراینے سے گزر رہے ہیں مگر حکمران اسلام اباد میں عیاشیوں میں مصروف ہے یہ بات پی پی پی گلگت بلتستان کے رہنماء محمد علی شاہ نے اپنے ایک بیان میں کہا انھوں نے کہا کہ مسلم لیگ ن صرف اخباری بیانات میں ترقیاتی منصوبے لگا رہی ہیں جبکہ زمین پر ان منصوبوں کا کوئی وجود ہی نہیں ہے انھوں نے کہا کہ کہاں ہے 2 سو ارب روپے کے منصوبے کہا ں ہے بجلی کے نئی منصوبے ان کے حکومت اتے ہی شغر تھنگ اور غواڑی جیسے منصوبے تاحال ملتوی کردیے گئے عوامی منصوبوں کو سیاسیت کا نظر کردیا گیا۔لیکن ابھی تک ہینزل پھنڈر اور چھلمش داس جیسے منصوبے شروع ہی نہیں ہوئے ہیں وزیر اعلی اور اس کی ٹیم عوام کو بے وقوف بنانا چھوڑ دے اور عوام کو لوڈ شیڈنگ سے نجات دلائے اور عوام سے کئے گئے اپنے وعدے پورے کرے صرف 4گھنٹے جو بجلی دی جارہی ہیں اس میں بھی لوڈ شیڈنگ کرنا انتہائی شرمناک عمل ہے۔اب عوام کا صبر کا پیمانہ لبریز ہو چکا ہے اگر حکومت نے مزید عوام سے جھوٹ بولا اور لوڈ شیڈنگ پر قابو نہیں پایا تو عوام نام نہاد عوامی نمائندوں کا گھیراو کرنے پر مجبور ہونگے۔حکومت اپنے من پسند منصوبوں میں کمیشن خوری کرنے کے بجائے ترقیاتی بجٹ پاور منصوبوں پر لگائے تاکہ گلگت بلتستان سے لوڈ شیڈنگ کا عذاب کم سے کم ہوسکے۔انتہائی شرم کی بات ہے پورے جی بی سے 1لاکھ میگا واٹ بجلی پیدا کی جا سکتی ہے مگر ہم اج بھی اندھیرے میں ہے۔عوام کو مزید دھوکہ نہ دیا جائے اور فوری طور پر بنیادی انسانی ضرورت بجلی کی فراہمی کو یقینی بنایا جائے۔

About TNN-GB

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc