ایس سی او کے تمام تر دعوے دھرے رہ گئے، چلاس میں ایس کام کی 4G سیمں منافع بخش کاروبار بن گئی۔

چلاس(چیف رپورٹر) شہر چلاس میں ایس کام 4 جی سمیں مہنگے دام میں کھلے عام فروخت ہونے لگے، صارفین کو ایس کام ریٹئلرز شاب والے دونوں ہاتھوں سے لوٹ رہے ہیں کوئی پوچھنے والا نہیں, ایس کام کی جانب سے واضح ہدایت جاری ہونے کے باوجود بھی ریٹئلرز نے ہدایات کو ہوا میں اڑا دئیے،غریب شہریوں کو کھلے عام لوٹا جا رہا ہے, عوامی حلقوں کی جانب سے تشویش کا اظہار، عوامی حلقوں نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ شکایات نوٹ کرانے کے باوجود بھی کوئی ایکشن لینے والا نہیں,عوامی حلقوں کا کہنا ہے کہ شہر چلاس میں ایس کام کی ناقص سروس عوام کے لئے دردسر بن چکا ہے,انٹر نیٹ سمیت ناقص سنگنل کی وجہ صارفین اپنے پیاروں سے بات کرنے سے مجبور ہیں,جبکہ شہر چلاس میں ایس کی سمیں کھلے عام مہنگے دام میں فروخت ہورہی ہے, ایس سی او کی جانب سے ایس ایم ایس اور اشتہارات کے زریعے کہا گیا ہے کہ دو سو سے زائد کا رقم ادا نہ کریں, ایس سی او حکام کی جانب واضع ہدایت کے باوجود بھی اس پر عمل درآمد نہیں ہورہا ہے, ایس کام کی سمیں دو سو کے بجائے ﮈھائی روپے سے لیکر ساڑھے تین سو تک غیرقانونی فروخت کیا جارہا ہے.عوامی حلقوں نے ایس سی او حکام بالا مطالبہ کیا ہے کہ ان ریٹئلروں کے خلاف ایکشن لیا جائے اور دیامر بھر میں ایس کام سروس کومکمل فعل کیا جائے۔

About TNN-GB

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc