گلگت بلتستان کیلئے کشمیر طرز کا سیٹ اپ نامنظور، حفیظ الرحمن کا مطالبہ، سوشلستان پر ہنگامہ۔

اسلام آباد( نامہ نگار خصوصی) وفاق کی جانب سے گلگت بلتستان کیلئے مجوزہ پیکج میں خطے کی ستر سالہ محرمیوں کا ازلہ کرنے کے ساتھ گلگت بلتستان کے عوام کی دیرینہ مطالبے کو مدنظر رکھتے ہوئے گلگت بلتستان کیلئے بھی مسلہ کشمیر کی ممکنہ حل تک کیلئے آذاد کشمیر طرز کے انتظامی سیٹ دینے کی آفر کو وزیر اعلی نے ٹھکرا کر قانون ساز اسمبلی کے اختیارات میں اضافہ کا مطالبہ کیا ہے۔ اس خبر کے بعد گلگت بلتستان میں سوشل میڈیا پر ہنگامہ برپا ہوگیا اور حقوق گلگت بلتستان کیلئے سوشل میڈیا پر مسلسل متحرک ایکٹوسٹ حضرات حفیظ الرحمن پر برس پڑے۔ عوامی حلقوں نے حفیظ الرحمن کے اس فیصلے کو ڈکٹیٹرشب قرار دیا ہے۔ سوشل میڈیا پر کل رات سے ہی مختلف واٹس ایپ گروپس اور فیس پیج سمیت پاکستان سمیت دنیا بھر میں مقیم گلگت بلتستان کے معاملات میں سنجیدگی سے سوچ بچار کرنے والوں نے اُن کے انکار پر نہ صرف حیرانگی کا اظہار کیا جارہا ہے بلکہ گلگت بلتستان کی مستقبل اور اس خطے کی قانونی اور آئینی شناخت اور مستقبل کی بقاء کیلئے اُن کے سیاسی کردار پر بھی شک کیا جارہا ہے۔ عوامی حلقوں کا کہنا ہے کہ مسلہ کشمیر کے تناظر میں جب گلگت بلتستان کو مکمل آئینی صوبہ نہیں بنایا جاسکتا تو دوسرے آپشن کے طور مسلہ کشمیر پر کسی قسم کی آنچ آئے بغیر سی پیک جیسے اہم بین الاقوامی منصوبے میں پاکستان دشمن ملک بھارت کا منہ بند کرنے اور اقوام متحدہ کے چارٹرڈ کو چھیڑے بغیر بین الاقوامی قوانین کے مطابق کشمیر طرز کا سیٹ اپ نہ صرف پاکستان کے مفاد میں ہے بلکہ سی پیک میں گلگت بلتستان کی بہتر کارکردگی کی ضمانت ہے۔ ہمارے نمائندے نے کل رات سے لیکر آج صبح تک اس حوالے سے کئی درجن واٹس ایپ گروپ اور کئی سو افراد کے سوشل میڈیا پر اس حوالے سے تجزیات بیانات اور احتجاج کے حوالے سے مکمل سروے کیا تو ذیادہ تر افراد نے گلگت بلتستان کے حوالے سے حفیظ الرحمن کے سیاسی کردار کو بھی شک کی نگاہ سے دیکھا جارہا ہے، عوامی حلقوں نے حفیظ الرحمن کو قومی سوچ سے عاری ایک انا پرست شخص قرار دیا ہے جو اپنے عہدے کا ناجائز فائدہ اُٹھا کر کشمیری قیادت کو خوش کرنے کیلئے گلگت بلتستان کے جائز اور قانونی مطالبات کو نظرانداز کرتے ہیں۔ عوامی حلقوں نے گلگت بلتستان کونسل کی خاتمے کو خوش آئند قرار دیا ہے اور وفاق پاکستان سے مطالبہ کیا ہے کہ گلگت بلتستان کو کسی بھی صورت کشمیر طرز کا سیٹ دیکر سی پیک میں پاکستان دشمن عناصر کے منہ کو لگام دینے کیلئے عملی اقدام اُٹھائیں۔

About TNN-GB

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc