حکومت نگر چھلت تحصیل کی بحالی کا وعدہ پورا کریں۔

نگر ( بیورو رپورٹ) چیف سیکریٹری گلگت بلتستان ڈاکٹر کاظم نیاز اور سیکریٹری داخلہ تحصیل چھلت کے فوری قیام کے لئے احکامات جاری کر کے عوامی مسائل و مشکلات کم کریں ۔ علی محمد ملک صدر پی پی پی تحصیل چھلت نگر کا بیان ۔تفصیلات کے مطابق آٹھ سال کا عرصہ گزر گیا نگر کی تاریخ کا پہلا اور گلگت بلتستان کی تاریخ کا دوسرا تحصیل بحال نہیں ہو سکا ہے۔ ان خیالات اظہار کرتے ہوئے سابق ممبر یونین کونسل چھلت اور صدر پی پی پی تحصیل چھلت شینبر نے کہا ہے کہ آٹھ سال قبل قدیم تحصیل چھلت کے قیام کے سلسلے میں تمام تر قانونی تقاضے پورے کئے جا چکے ہیں لیکن ابھی تک دفتر بنا ہے اور نہ ہی کوئی ملازم بھرتی ہو گیا ہے ۔ جبکہ دوسری طرف مذکورہ تحصیل کے لئے تھانہ اور ایک فلاحی ادارے کا دفتر بھی قائم کیا جا چکا ہے۔ مذکورہ تحصیل کے ساتھ سابق وزیر اعطم سید یوسف رضا گیلانی کے اعلان کردہ دیگر دوسری تحصیلیں دنیور اور ڈاغونی فعال ۴ سال قبل مکمل فعال ہو کر عوام کو سہولیات فراہم کر رہے ہیں لیکن ہمارے علاقے کی آبادی ضلع نگر کی پینتالیس فیصد سے زیادہ ہے لیکن بدقسمتی سے آج تک تحصیل کا قائم نہ ہونا علاقے کی پینتیس ہزار آبادی سے ظلم کے مترادف ہے ۔ہم چیف سیکریٹری ڈاکٹر کاظم نیاز اور سیکریٹری داخلہ جواد اکرام سے اپیل کرتے ہیں کہ تحصیل چھلت کے قیام کے سلسلے میں فوری قیام کے احکامات جاری کریں تاکہ علاقے کے دور دراز سے آنے والے سائیلین سمیت پوری آبادی کو سہولت دستیاب ہو ۔ سابق ممبر یونین کونسل چھلت ٹاؤن علی محمد ملک نے سیکریٹری داخلہ سے اپیل کی ہے کہ اس اہم معاملے پر عوامی مسائل و مشکلات کے حل کے لئے اقدامت کریں اور تحصیل کے قیام کے لئے متعلقہ محکموں کو احکامت جاری کریں۔

About TNN-GB

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc