نائب تحصیلدار عالم خان کی نااہلی عوام تانگیر میں انتشار کی سبب بن گئی۔

تانگیر(عبدالحنان شاہ سے) کچھ عرصے سے داریل تانگیر ڈسٹرک کے قیام کے بارے میں علاقے میں مطالبہ شدت پکڑگئی ہے۔ جس باعث صوبائی حکومت کی خصوصی ہدایت پر کمشنر دیامر ڈویژن سید عبدالوحید شاہ نے آج مورخہ یکم فروری 2018 کو اپنے آفس چلاس میں داریل و تانگیر ضلع کے قیام اور ہیڈ کواٹر پر مشاورت کیلئے عمائیدین داریل تانگیر 22/22 ارکان پر مشتمل کمیٹی کااجلاس طلب کیا تھا۔ مگر بدقسمتی سے اسسٹنٹ کمشنر تانگیر کی عدم موجودگی رخصت پر ہونے کے باعث قائمقام اے سی نائب تحصیلدار عالم خان نے تانگیر سے یکطرفہ سیاسی پارٹی پر مشتمل اکثریتی ارکان والی کمیٹی لسٹ کمشنر آفس بھجوایا تھا جس پر سابق سیپکر گلگت بلتستان اسمبلی نے اعتراض اٹھایا کہ نائب تحصیلدار اور انتظامیہ نے جانبدارانہ کردار ادا کرتے ہوئے یکطرفہ پارٹی پر مشتمل کمیٹی لسٹ کمشنر آفس بھجوایا ہے جس کو وہ مسترد کرتے ہوئے آج کی میٹنگ سے بائیکاٹ کررہےہیں۔ جس باعث میٹنگ ادھوری رہ گئی ۔ نائب تحصیلدار عالم خان کی نااہلی اور غلط رویے کی باعث ایک اہم میٹنگ التوا کا شکار ہوئی۔ اگر تحصیلدار مزکور فریقین کی مشاورت سے متفقہ کمیٹی لسٹ بجھواتے تو آج کی میٹنگ کے مثبت نتائج برامد ہوتے۔ تحصیلدار مزکور کے اس رویے کے خلاف عوام تانگیر میں سخت غصہ پایا جاتا ہے۔

About TNN-GB

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc