مشیر اطلاعات گلگت بلتستان شمس میر کون ہے؟ تہلکہ خیز انکشاف۔

گلگت(ڈسٹرک رپورٹر) گلگت کے ایک مقامی صحافی نے اپنے سوشل میڈیا پر انکشاف کرتے ہوئے لکھا ہے کہ وزیر اعلی کے مشیر خاص شمس میر پہلے قراقرم یونیورسٹی میں بطور عارضی لیکچرر کے کام کرتے تھے اور اس عارضی لیکچرر پر بھی وزیر اعلی حافظ حفیظ الرحمن کی خصوصی سفارش پر پونچا تھا۔ وزیر اعلی نے اُنہیں مستقل کرنے اور مستقل کرنے کیلئے عمر کی حد میں رعایت کیلئے صدر پاکستان خصوصی خط بھی لکھا مگر جواب کا مجھے علم نہیں۔ انہوں نے مستقل نہ ہونے کی وجہ سے یونیورسٹی کی عارضی ملازمت کو وزیراعلی کے مشہورے پر خیرباد کہہ دیا اورمسلم لیگ ن کے میڈیا کواڈینیٹر کے طور پر ذمہ داریاں سنبھالنے کی تان لی۔ مسلسل خوش آمدی سے خوش ہوکرتمام نظریاتی کارکنوں کو ایک طرف رکھ کر وزیراعلی نے اُنہیں بورڈ آف انوسٹمنٹ کا چیف ایگزیکٹو آفیسر  مقرر کردیا۔ یوں وہ اچانک عارضی ملازمت اور میڈیا کواڑڈنیٹر کی نوکری سےگریڈ 20 اور 21 کا آفسر بن گیا۔مگر قسمت کی دیوی اُن پر مہربان نہ تھے یہی وجہ ہے کہ اُنکی سلیکشن منسوخ ہوگئی۔ بورڈ آف انوسٹمنٹ میں اُنکی سلیکشن میں ناکامی کے بعد وزیر اعلی نے ایک عوامی منتخب نمائندے سے وزیر اطلاعات کا قلمدان چھین کر مشیر اطلاعات کا قلمدان شمس میر کے ہاتھ میں تھما دیا جوکہ اُن کا وزیر اعلی کیلئے مسلسل یس باس کا تخفہ ہے۔

About TNN-GB

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc