پنجاب کے جامعات میں گلگت بلتستان کے طلباء کو ہراساں کیا جانے لگا۔زیر تعلیم طلباء کو پختون سمجھ کر گرفتار اور مقدمات بھی درج کرلئے گئے۔

لاہور(تحسین علی رانا) بلتستان سے تعلق رکھنے والے دلاور عباس کو لاہور میں شہید کئے جانے کے بعد۔اور پنجاب یونیورسٹی میں فسادات کے بعد گلگت بلتستان کے طلباء کو پنجاب پولیس نے ہراساں کرنا شروع کردیا ہے۔ ذرائع کے مطابق بہت سارے طلباء کو پختون سمجھ کر گرفتاری عمل میں لائی گئی ہے۔اور ان پر مقدمات بھی درج کئے گئے ہیں۔ جی۔بی کی صوبائی حکومت پنجاب پولیس کی طلباء کے خلاف ایکشن پر بلکل خاموش ہے۔ پنجاب میں زیر تعلیم طلباء نے پنجاب پولیس کے جی۔بی کے طلباء کیساتھ روا رکھے جانے والے روئے کو تعصبانہ قرار دیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ایسے اقدامات طلباء کو یہ سوچنے پر مجبور کررہے ہیں کہ حکومتی سطح پر لسانی نفرت کو ترویج دی جارہی ہے۔ طلباء نے جی۔بی کی صوبائی حکومت سے آپیل کی کہ وہ پنجاب میں جی۔بی کے طلباء کیساتھ ہونے والی زیادتیوں کا نوٹس لیں۔

About TNN-GB

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc