گلگت بلتستان میں ٹیکس کی خاتمے کیلئے مظاہرے کرنے والوں کی نگرانی شروع،وزیر قانون نے اسے نیشنل ایکشن پلان کا حصہ قرا ردیا ہے۔

گلگت ( آر این این) حکومت گلگت بلتستان نے ٹیکس کے خلاف مظاہروں مرکزی کردار ادا کرنے والوں کی نگرانی شروع کردی۔ تفصیلات کے مطابق وزیر قانون حکومت گلگت بلتستان نے اس حوالے سے کہا ہے کہ شیڈول فور میں ڈالنے کا مطلب ان کی آزادی کو ختم کرنا یا انہیں نظر بند کرنا ہرگز نہیں بلکہ صرف ان کی نقل حرکت پر نظر رکھنا ہے ۔ انہوں نے مزید کہاایسے افراد جو ماضی میں کسی کالعدم تنظیم کے رکن یا رہنما رہے ہوں ان کی نقل و حمل پر نظر رکھی جاتی ہے۔صوبائی وزیر قانون نے شیڈول فور میں ڈالنے والے افراد کے نام بتانے سے انکار کیا ۔ وزیر قانون اورنگزیب ایڈوکیٹ نے تسلیم کیا کہ ٹیکس خاتمے کےلئے ہونے والا حالیہ مظاہرہ، گلگت بلتستان کی تاریخ کا سب سے بڑا مظاہرہ تھا۔ صوبائی وزیر قانوں نے مزید کہا کہ مظاہرین کوغیر ملکی فنڈنگ ملنے کے امکان کو نظرانداز نہیں کیا جا سکتا لہذا اس بارے میں تحقیقات جاری ہیں۔ وزیر قانون اورنگریب خان ایڈووکیٹ نے نیشنل ایکشن پلان سیاسی مخالفین کے خلاف استعمال ہونے کے تاثر کو مسترد کرتے ہوئے کہا کہ گلگت بلتستان میں اس پلان پر اس کی روح کے مطابق عمل در آمد ہونے کی وجہ سے صوبے میں امن و امان بحال ہو چکا ہے۔انہوں نے کہا کہ اس کا سہرا علماء کرام کے ساتھ وہاں کے عوام کو جاتا ہے۔

About TNN-GB

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc