جس جماعت کا نشان ایک درندہ ہے ان سے انصاف کی توقع نہیں رکھی جاسکتی۔

گلگت(پ،ر)پیپلز پارٹی گلگت بلتستان کی صوبائی سکریٹری اطلاعات سعدیہ دانش نے کہا ہے کہ نواز لیگ کا آغاز آمرانہ جبکہ کارنامہ پانامہ اور اختتام بھاگ جانا ہے۔ٹیکسز ایشو پر عوام سے شکست کے بعد صوبائی حکومت بوکھلاہٹ کا شکار ہوچکی ہے اور اپنی ناکامی کا غصہ پیپلزپارٹی پر نکالنے کی کوشش کی جارہی ہے۔پیپلز پارٹی پر فرقہ واریت کا الزام لگانے والوں کو وزیر اعلی کے بیان کی مذمت کرنی چاہیے۔پیپلزپارٹی کے دور حکومت میں بھی دھرنے اور احتجاج ہوئے مگر ہم نے کبھی غیر ذمہ دارانہ اور عوام کو تقسیم کرنے والے بیانات نہیں دئے بلکہ سنجیدگی سے مسائل کا حل نکالا۔پیپلز پارٹی کے دور میں دہشتگردی اس لئے ہوئی کہ ہم کھل کر دہشتگردی اور انتہا پسندی کی مذمت کرتے ہیں۔اسی وجہ سے پیپلزپارٹی پارٹی کے قائدین اور ہزاروں کارکنان دہشتگردی کا شکار ہوچکے ہیں۔جس جماعت کے قائدین دہشتگردی کی مذمت تک نہیں کر سکتے انکا پیپلز پارٹی پر الزام نہایت مضحکہ خیز اور الٹا چور کوتوال کو ڈانٹے کے مترادف ہے۔قوم کو اس بات کا بخوبی علم ہے کہ بے نظیر بھٹو شہید کی حکومت کے خاتمے کے لئے نواز شریف نے اسامہ بن لادن سے پیسے لئے تھے۔جس جماعت کے قائد کو عالمی اور عدالتی طور پر بدعنوانی ثابت ہونے پر نااہل قرار دیا گیا ہو ان کا پیپلز پارٹی پر کرپشن کا الزام سیاسی لطیفہ یے۔عوام جانتے ہیں کہ شیر کی کھال میں چھپے گیدڑ وقت آنے پر فرار ہوجاتے ہیں۔جس جماعت کا نشان ایک درندہ ہے ان سے انصاف کی توقع نہیں رکھی جاسکتی۔ٹیکسز کے خاتمے کا تمام تر کریڈٹ گلگت بلتستان کے عوام کو جاتا ہے جنہوں نے صوبائی حکومت کے تقیسم کرو اور حکومت کرو کے فارمولے کو مسترد کر کے انہیں دھول چٹادی۔

About TNN-GB

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc