ٹیکس ایڈپٹیشن ایکٹ 2012 ختم نہیں بلکہ معطل۔ احکامات جاری کر دئے گئے۔

اسلام آباد (سرکاری ذرائع)وزیر اعظم پاکستان شاہد خاقان عباسی نے گلگت بلتستان کیلئے 2012کا ٹیکس ایڈپٹیشن ایکٹ جو پیپلز پارٹی کے دور میں نافذ ہوا تھا اسے گلگت بلتستان کونسل اور گلگت بلتستان اسمبلی کی سفارشات کی روشنی میں نیا ایکٹ لانے تک معطل کرنے کے احکامات جاری کر دئے ،اس بات کا فیصلہ اسلام آباد میں وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی کی صدارت میں ہونے والے اجلاس میں کیا گیااجلاس میں وزیر اعلی گلگت بلتستان حافظ حفیظ الرحمن سمیت اعلی حکام نے شرکت کی ،اجلاس میں فیصلہ ہواکہ گلگت بلتستان کونسل اور گلگت بلتستان اسمبلی کی ٹیکس کمیٹی کی سفارشات کی روشنی میں ایسا ایکٹ مرتب کیا جائے گا جس میں گلگت بلتستان کے شہریوں کے اعتراضات بھی ختم ہوں گے اور سہولیات بھی ہوں گے اور خصوصی چھوٹ بھی ہوگی ،اجلاس میں اتفاق ہوا کہ گلگت بلتستان کونسل کے آئندہ اجلاس میں گلگت بلتستان کونسل اور گلگت بلتستان اسمبلی کی ٹیکس کمیٹی کی سفارشات روشنی میں ایکٹ کی منظوری تک گلگت بلتستان سے 2012کے ٹیکس ایڈپٹیشن ایکٹ کے تحت کسی قسم کا کوئی ٹیکس وصول نہیں کیا جائے گا۔

About TNN-GB

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc