گلگت بلتستان کی عوام کو نئے سال کے پہلے روز بڑی خوشخبری، وفاقی حکومت کا ٹیکس ایکٹ 2012 کو ختم کرنے کا فیصلہ کر لیا ہے

اسلام آباد(زاہد حلیم) گلگت بلتستان کی عوام کو نئے سال کے پہلے روز بڑی خوشخبری،گلگت بلتستان میں ٹیکسز کے خلاف دو ہفتے سے جاری عوامی احتجاج رنگ لے آیا،وفاقی حکومت کا ٹیکس ایکٹ 2012 کو ختم کرنے کا فیصلہ کر لیا ہے،ٹیکسز معاملے پر خصوصی وفاقی کمیٹی کے سربراہ ملک ابرار نے خوشخبری سنا دی،ملک ابرار نے کہا کہ گلگت بلتستان ٹیکس ایکٹ2012 کی جگہ نیا ٹیکس ایکٹ لایا جائے گا،نئے ٹیکس ایکٹ کی منظوری گلگت بلتستان کونسل سے لی جائیگی، ٹیکسز کے معاملے پر گزشتہ روز طویل مذاکرات ہوئے جس میں گلگت بلتستان ایکشن کمیٹی ،انجمن تاجران تمام اسٹیک ہولڈرز شریک تھے اور اسٹیک ہولڈرز سے تین رکنی نکات پر مذاکرات ہوئے،ان کا کہنا تھا کہ ٹیکس ایکٹ 2012 سے عام آدمی کی زندگی بری طرح متاثر ہو رہی ہے،وزیراعظم پاکستان نے مسئلے کا جلد از جلد حل نکالنے کی ہدایت کی تھی، خصوصی کمیٹی کے اجلاس میں ٹیکس ایکٹ کے خاتمے پر اتفاق کیا گیا ہے اور
خصوصی کمیٹی کی ابتدائی سفارشات وزیراعظم کو بھجوا دی ہیں، خصوصی کمیٹی کی حتمی سفارشات چند روز میں مرتب ہو جائیں گی،انہوں نے مزید کہا کہ
نئے ایکٹ کے تحت پانچ لاکھ سے کم آمدن والوں پر ٹیکس لاگو نہیں ہو گا، گلگت بلتستان کی بڑی کمپنیوں اور ہوٹلز پر ٹیکس لگایا جائے گا،

About admin

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc