عمران ندیم کا تعلیم کی ترجیحات کے حوالے سے بیان مضحکہ خیز ہے۔ صدر بازار کمیٹی شگر

شگر(نامہ نگار) صدر بازار کمیٹی چھورکاہ حاجی فداحسین نے کہا ہے کہ شگر سے منتخب ممبر اسمبلی عمران ندیم کی اخباری بیان جس میں تعلیم اولین ترجیح پر حیرت ہوں۔ گذشتہ ادوار میں 10سال اقتدار کے مزہ لینے کے بعد اب 4سال ہونے کو ہے لیکن موصوف کا چھورکاہ میں تعلیم کی بہتری کیلئے اقدامات کہاں ہے۔انہوں نے کا کہ یونین کونسل چھورکاہ جو 10ہزار سے زائدد نفوس پر مشتمل ہے۔یہاں صرف ایک لڑکوں کیلئے صرف ایک ہائی سکول جبکہ لڑکیوں کیلئے کوئی بھی ہائی سکول موجود نہیں۔جبکہ انہی سکولوں میں اساتذہ اور کلاس رومزکی کمی کی وجہ سے تعلیمی صورتحال سب کے سامنے ہیں۔ انکا کہناتھا کہ یونین کونسل کی بیشتر آبادی غریب اور متوسط گھرانوں پر مشتمل ہے اور ان کے بچوں کی روشن مستقبل کا دارومدار سرکاری تعلیمی اداروں پر ہے۔ لیکن بدقسمتی سے شگر کے تیسرے بڑے یونین میں ابھی تک لڑکیوں کیلئے کوئی ہائی سکول موجود نہیں۔ جبکہ بوائز کیلئے صرف ایک ہی ہائی سکول موجود ہے۔ جوکہ علاقے کی نمائندے کا تعلیم سے دوستی اور ترجیح کا ثبوت ہے۔ منتخب نمائندے کو اپنے ووٹروں کی جانب سے چھورکاہ میں تعلیمی صورتحال کی خرابی کے حوالے سے بتانے کے باؤجود چھورکاہ میں تعلیمی صورتحال بہتر بنانے کیلئے کسی قسم کی اقدامات نہ اٹھانا لمحہ فکریہ ہے۔ انہوں ممبر اسمبلی سے مطالبہ کیا ہے کہ اگر تعلیم کی اور تعلیمی اداروں کی بہتری واقعی میں ان کا ایجنڈا ہے تو چھورکاہ کی تعلیم کی بہتری کیلئے اقدامات کریں۔

About admin

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc