چھپروٹ نگر کے طلبہ و طالبات موجودہ دور میں بھی تین گھنٹے سفر کر کے سکولز اور کالجزجانا سٹوڈنٹس کے ساتھ ظلم کے مترادف ہے۔ ایڈوکیٹ ریاضیت علی

گلگت (پ ر) نوجوان رہنماء و ماہر قانون ریاضت علی ایڈوکیٹ نے کہا ہے کہ چھپروٹ نگر کے طلبہ و طالبات موجودہ دور میں بھی تین گھنٹے سفر کر کے سکولز اور کالجزجانا سٹوڈنٹس کے ساتھ ظلم کے مترادف ہے۔علاقے کے منتخب ممبر الیکشن کے ٹائم ٹرانسپورٹ کا اعلان کر کے الیکشن کے بعد منظر سے غائب ہوتے ہیں جو کہ افسوس المیہ ہے۔ چھپروٹ ایک تعلیم یافتہ خطہء ہے جہاں سے کئی بیشتر افرادبیوروکریٹس، ڈاکٹرز،فلاسفر، فوجی افسران اور کئی اعلیٰ عہدوں پہ فائز ہیں۔گلگت کے کم آبادی علاقہ ہونے کے باوجود بھی زیادہ تر لوگ اپنا زندگی پاک فوج میں گزارتے ہیں۔ شندور پولو مقابلہ ہو یا شعراء علاقے کے لوگ اپنا لوہا منوا چکے ہیں۔اس لیے ان لوگوں کو آگے لانے میں گورنمنٹ خصوصی دلچسپی لے کے علاقے کی خوشحالی اور تعلیم کو عام کر دے۔انہوں نے ڈی سی نگر , ڈی ڈی ای نگر اور جاوید ممبر اسمبلی مطالبہ کیا کہ چھپروٹ کے سٹوڈنٹس کے مسئلوں کو حل کرنے میں کلیدی کردار ادا کرے۔

About admin

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc