ضلع شگر میں تعینات ضلعی آفیسران موج مستیاں عروج پر۔ سرکاری گاڑیوں اور فیول کا بے دریغ استعمال جاری۔

شگر(کرائم رپورٹر)شگر میں تعینات ضلعی آفیسران موج مستیاں عروج پر۔ سرکاری گاڑیوں اور فیول کا بے دریغ استعمال جاری۔ضلعی شگر کے بیشتر فنڈ آفیسران کی گاڑی فیول کی نذرہونے لگے۔بعض آفیسران نے شگر میں رہائش کے نام پر سرکاری کوارٹروں کو قبضہ جماکر لاکھوں سرکاری فنڈ سے گھریلو اشیاء اور فررنیچر خریدنے کے باؤجود شگر میں رہائش کے بجائے سکردو رہائش کو ترجیح دینے لگے۔نوزائید ضلع شگر جو کہ صوبائی حکومت کی عتاب کا شکار ہے۔ جہاں انہیں دیگر اضلاع کے مقابلے میں سب سے کم فنڈ جاری ہورہے ہیں وہاں اس وقت شگر میں تعینات سرکاری آفیسران کی موج و مستیاں عروج پر ہے۔ سرکاری گاڑیوں اور ان کے فیول کے بے دریغ استعمال بھی عروج پر ہے۔ذرائع کے مطابق شگر اضلاع کے بیشتر فنڈ ان آفیسران کی عیش و عشرت پر خرچ ہورہا ہے۔بیشتر سرکاری آفیسران روزانہ سکردو سے آتے جاتے ہیں جہاں ان کی فیول سرکار ی کھاتے سے وصول کی جارہی ہے۔ ذرائع کا کہنا کہ ایک محکمے کے سربراہ نے اپنے رہائش کیلئے سرکار سے کوارٹر الاٹ کرنے کے بعد اس میں ذاتی استعمال کیلئے سرکاری کی فنڈ سے لاکھوں روپے اخراجات کرنے کے باؤجود سکردو میں دوبارہ سرکاری رہائش حاصل کرلیا ہے۔جہاں شگر کی فنڈ سے خریدے گئے اشیاء منتقل کرنے کی تیاری کی جارہی ہے۔

About admin

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc