استور میں شدید سردی کے باعث مختلف بیماریاں پھیل گئی، درجنوں مال موشی ہلاک انسانوں کو بچانے کیلئے حکمت عملی کی ضرورت۔

استور(بیورو رپورٹ)استور میں سردی کی آمد کے ساتھ ساتھ مختلف بیماریوں کے شکار درجنوں مال موشی ہلاک ہوچکی ہے ۔تفصیلات کے مطابق گزاشتہ ایک ماہ کے اندر استور میں درجنوں مال موشی مختلف بیماریوں کے باعث ہلاک ہوچکی ہیں دو دن قبل استور کے بالای علاقے گھومی میں گل شیر نامی شخص کے پانچ مال موشی ایک ہی رات ہو ہلاک ہوی ہیں اس شخص کے گھر میں پانچ موشی ایک ساتھ ہلاک ہونے کے بعد غیریب کے گھر میں ماتم کا سماء تھا ۔علاقے کی عوام کا کہنا ہے کہ محکمہ لایو اسٹاک موشیوں کو بھر وقت ٹیکے نہیں لگاتی ہے اور موشیاں کب بیمار ہوتی ہے تو ادویات بھی نہیں ملتی ہے جس لے باعث ہمارے لاکھوں روپے کی مال موشی ضایع ہوجاتی ہے کوی پوچھنے والا نہیں ہے استور کے مختلف علاقوں میں مال موشی ہلاک ہونے کا سلسلہ جاری ہے جبکہ دوسری جانب اس حوالے سے ڈپٹی ڈایریکٹر محکمہ لایو اسٹاک مدثر سہیل کا کہنا ہے کہ اب تک جتنے مال موشی ہلاک ہوچکے ہیں ان مردہ جانوروں کے بلڈ سمپلز لینے کے بعد جب لبٹاری سے ٹیسٹ کرویا تو پتا چلا موشی بیمارہوں کے باعث ہلاک نہیں ہوے ہیں بلکہ آلو کے پتے کھانے سے ہلاک ہوے ہیں۔۔کیوں کہ لوگ آلو کی پیدارو کے لیے مختلف قسم کی زہلی کھادیں استمال کرتے ہیں جس کی وجہ سے پیدور کے بعد ان زہریلے کھاد کا اثر آلو کے پتوں پر پڑ جاتا ہے لوگ اپنے مال موشی کو آلو کے پتے کھلاتے ہیں جس کی وجہ سے لوگوں کی موشی ہلاک ہوتی ہے عوام الناس سے اپیل ہے اپنے قیمتی جانوروں کو آلو کے پتے نہیں کھلایں یہ زہریلے ہیں جس کی وجہ سے موشی ہلاک ہوتے ہیں۔

About admin

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc