ڈپٹی کمشنر نگر کی تعیناتی کے بعد نگر کے سرکاری د فاتر میں کام کی پھرتیاں اور ملازمین کے بھاگ دوڑ میں اضافہ ،ہر طرف ہلچل کا سماں

نگر ( بیورو رپورٹ) ڈپٹی کمشنر نگر کی تعیناتی کے بعد نگر کے ضلعی اداروں کے فاتر میں کام میں پھرتی اور بھاگ دوڑ میں اضافہ ہونے لگا۔ گزشتہ دنوں ڈی سی نگر نوید احمد کا RHCچھلت کا اچانک دورے کے بعد ہسپتال کے لیبارٹری،ایکسرے روم اور ڈینٹل یونٹ میں صفائی کا نظاام بہتر ہو گیا اور ادویات کی بھاری کھیپ بھی ہسپتال پہنچائی گئی ہے۔ تا ہم لیڈی ڈاکٹر ابھی تک نہیں آسکی۔ عوامی حلقوں نے ڈپٹی کمشنر نوید احمد کی کار کرددگی کو علاقے میں تبدیلی کی نوید قرار دے دیا۔ عوامی حلقوں نے مطالبہ کیا کہ ضلعی اداروں کے ملازمین کو اگر باقاعدہ ڈیوٹی فل بنایا جا ئے تو عوام کو اور زیادہ آسانیاں پید اہوں گی۔ انہوں نے ڈپٹی کمشنر نگر سے مطالبہ کیا ہے کہ آر ایچ سی چھلت میں لیڈی ڈاکٹر کوی تعیناتی عمل میں لانے کے لئے فوری اور ٹھوس اقدامات لینے کی ضرورت ہے کیوں کہ علاقے میں مرد وں سے زیادہ خواتین کی امراض کا مسلہ ہے ۔ اس کے ساتھ ایکسرے مشین،ڈینٹل یونٹ کی مکمل بحالی اور ایکسرے مشین کو ٹھیک کرانے کے لئے بھی پیش قدمی کی جائے ۔ عوامی حلقوں نے ڈپٹی کمشنر نگر کی کارکردگی کو سنجیدہ قرار دیتے ہوئے کہا کہ اگر سرکاری افسران اور ملازمین اپنی فرائض کی ادائیگی میں ڈپٹی کمشنر نگر نوید احمد کی تقلید کریں تو عوام کے مسائل میں فوری حد تک کمی آسکتی ہے ۔ قابل زکر بات یہ ہے کہ نو تعینات ڈی سی نگر نوید احمد کی نگر تعیناتی کے بعد سرکاری اداروں کے ملازمیں کا اندرون دفتر اپنی فرائض میں تیزی لانے سمیت ان کی کار کردگی میں بیرون دفتر بھی کافی بہتری بھی آنے لگی ہے۔

About admin

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc