اپوزیشن لیڈر منتخب ہوتے ہی کپٹن ریٹارئرڈ محمد شفیع خان کا دبنگ بیان، غیرقانونی ٹیکسز کو مکمل طور پر ختم نہ کرنے کی صورت میں 24 نومبر کے بعد سول نافرانی کا اعلان۔

گلگت ( سوشل نیوز) قانون ساز اسمبلی میں نو منتخب اپوزیشن لیڈر کپٹن ریٹائرڈ محمد شفیع نے سوشل نیٹ ورک فیس بُک پر جاری کئے ایک بیان میں اُنہوں نے کہا ہے کہ گلگت بلتستان کے حالات نازک ترین ہیں یہاں بات اب سول نافرمانی کی تحریک تک پہنچ گئی ہے۔ 23 نومبر تک حکومت نے ٹیکسزواپس نہ کئے تو24نومبرسے سول نافرمانی تحریک شروع ہوگی ہم ممکنہ سول نافرمانی تحریک کابھرپورساتھ دیں گے اور اس وقت تک پیچھے نہیں ہٹیں گے جب تک ٹیکسز کے خاتمے کانوٹیفکیشن جاری نہیں کیاجاتا۔ انہوں نے کہا کہ گلگت بلتستان آئینی طورپرپاکستان کا حصہ نہیں ہے تویہاں کس قانون اورآئین کے تحت ٹیکسزنافذکئے جارہے ہیں۔ٹیکسز کے فیصلے کو23نومبرتک ہرصورت میں واپس لیناہوگا ورنہ24نومبرسے سول نافرمانی کی تحریک شروع ہوگی جو کسی بھی صورت میں علاقے کے لئے بڑاخطرناک ثابت ہوگی۔انہوں نے کہا کہ حکمرانوں کوجوتے پڑیں گے عوام اب مزید ظلم وزیادتی برداشت نہیں کریں گے ہم عوام کے نمائندے ہیں۔وزیراعلیٰ کی کابینہ کاآدمی نہیں ہوں میں ہرجگہ عوامی مفادات کی بات کروں گا۔کبھی عوام کے حقوق پرکسی کو ڈاکہ مارنے نہیں دوں گا۔

About admin

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc