گلگت بلتستان میں ٹیکسسز کے نفاذ کے خلاف تاجر تنظیموں اور ٹرانسپورٹرز کی کال پر گلگت بلتستان کے تمام ااضلاع میں تاریخی مکمل شٹر ڈاون اور پہیہ جام ہڑتال کی جارہی ہے .

سکردو(لیاقت کاظمی)سکردو میں تمام بڑی مارکیٹیں اور تجارتی مراکز سمیت بازار اور مضافات میں پرچون کی تمام.چھوٹی، بڑی دکانیں بھی بند کردی گیئں ہیں . جبکہ شہر اور گردو نواح میں پہیہ جام ہڑتال کی وجہ سے ٹریفک کی آمدورفت مکمل طور پر معطل ہے. پہیہ جام ہڑتال کے باعث پرائیوٹ سیکٹر کے تمام تعلیمی ادارے بند کردیے گئے ہیں جہاں نرسری سے مڈل کلاس تک جاری سالانہ امتحانات کے آج ہونے والے پرچے ملتوی کر دیے گئے ہیں . ادھر یاد گار شہدا پر زبردست مظاہرہ کیا گیا جہاں مرکزی انجمن تاجران بلتستان کے صدر غلام حسین اور دیگر نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ گلگت بلتستان کی آئینی حیثیت کا تعین کیے بغیر ٹیکس وصولی غیر آئینی اور بنیادی انسانی حقوق کے خلاف ہے انہوں نے کہا کہ ہمارا مطالبہ ہے کہ ملک کے دیگر صوبوں کی طرح گلگت بلتستان کو آئینی حقوق دینے کے بعد تمام ٹیکسسز نافذ کیے جائیں اس کے بغیر ہم کسی قسم ٹیکس نہیں دیں گے . انھوں نے کہا حکومت ہر طرح کے محصولات ختم کرکے نوٹفیکیشن جاری کرے۔

About admin

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc