حکومتی دعوے اور دھونس دھمکیاں بے سود ثابت ہوئی، گلگت بلتستان بھر میں غیرقانونی ٹیکسز کے خلاف کامیاب پُرامن شٹرڈاون ہڑتال جاری۔

گلگت ( تحریر نیوز) عوامی ایکشن کمیٹی کی کال پر گلگت بلتستان کی متنازعہ حیثیت کے مطابق حقوق کی حصول اور خطے پر گلگت بلتستان کونسل کی ایماء پر وفاقی حکومت کی جانب سے نافذ کردہ غیرقانونی ٹیکسز کے خلاف گلگت بلتستان پھر  میں پرُامن شٹرڈوان کا سلسلہ آج سے شروع ہوا ہے۔ ہڑتال کو ناکام بنانے کیلئے حکومت گلگت بلتستان کی جانب سے ہرقسم کے ہتکنڈے استعال کئے گئے یہاں تک کہ عوامی ایکشن کمیٹی کے چیرمین مولانا سلطان رائیس کو براہ راست دھکمی بھی دی گئی۔ اس دھمکی آمیز پریس کانفرس نے گلگت بلتستان کے عوام کو اور ذیادہ متحد کردیا اور شٹرڈوان ہڑتال کو کامیاب بنانے کیلئے گلگت بلتستان لائزر فورم، سول سوسائٹی،فارمیسٹ ایسوشی، پولٹری ایسوس ایشن سمیت گلگت بلتستان بھر کے تمام تجارتی تنطیموں نے اپنے حقوق کیلئے عوامی ایکشن کمیٹی کے ساتھ اظہار یکجہتی کرتے ہوئے کامیاب شٹرڈاون ہڑتال کا سلسلہ آج سے شروع کیا ہے۔

عوامی ایکشن کمیٹی کے چیرمین مولانا سلطان رئیس کا اس حوالے سے کہنا تھا کہ پُرامن احتجاج عوام کا حق ہے اور گلگت بلتستان کے عوام کو متنازعہ حیثیت کی بنیاد پر حقوق مانگنے کا قانونی اور آئینی حق آئین پاکستان اور اقوام متحدہ نے دیا ہوا ہے۔اُنہوں نے مزید کہا ہے کہ عوامی ایکشن کمیٹی کا مطالبہ ہے کہ حکومت ہود ہولڈنگ ٹیکس سمیت تمام قسم کے ٹیکسز کو گلگت بلتستان کو مکمل آئینی حقوق ملنے تک مستقل طور پر کعلدم قرار دیں اور عوامی ایکشن کمیٹی کے چارٹرڈ آٖف ڈیمانڈ پر عمل کریں۔

About admin

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc