ایم ڈبلیو ایم کے ڈپٹی سکریٹری جنرل ناصر شیرازی کا دن دہاڑے اغواہ ہونا ماورہ آئین اور غیر جمہوری عمل ہے۔ رہنما مجلس وحدت المسلمین شگر

شگر(عابدشگری)مجلس وحدت المسلمین شگر کے سیکریٹری جنرل شیخ کاظم ذاکری اور دیگر رہنماؤں محمد ظہیر عباس اور شیخ مظاہر حسین نے ایم ڈبلیو ایم آفس میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایم ڈبلیو ایم کے ڈپٹی سکریٹری جنرل ناصر شیرازی کا دن دہاڑے اغواہ ہونا ماورہ آئین اور غیر جمہوری عمل ہے۔وہ ایک محب وطن شہری ہے۔ انہوں نے ہمیشہ وطن عزیز کی استحکام کیلئے جدوجہد کی۔ ان کا قصور رانا ثناء اللہ کے خلاف ریفرنس لانا اور مسلم لیگ (ن) کی کالی کارتوں کا سامنا کرنا ہے جس کی وجہ سے پنجاب کے نام نہاد قوتوں نے غائب کرایا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ پاکستان کے اندر اہلیبیت سے ماننے والوں کو جینے کا حق چھینا جارہاہے۔ہم نے آج تک اپنے حقوق کیلئے قانون کو ہاتھ نہیں لگایا لیکن ہمیں دیوار سے لگایا جارہا ہے۔کیوں ہمارے اوپر ظلم کے پہاڑ توڑے جارہے ہیں۔ ہمارے کارکنوں کو دن دیہاڑے اغواہ کیا جارہا ہے ۔ہمیں بتایا جائے کہ ہمارا قصور کیا ہے ۔ موجودہ حکومت شیعیت کی خلاف ایجنڈے پر عمل پیرا ہے اور شیعہ نسل کشی کیساتھ شیعہ افراد کو غائب کرنا ان کا شیوہ بن چکا ہے۔ناصر شیرازی کودن دہاڑے لاپتہ کرنا حکومتی رٹ پر سوالیہ نشان ہے۔انہوں نے حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ اگر ناصر شیرازی کو فوری طور بازیاب نہ کرایا گیا تو سخت احتجاج پر مجبور ہونگے۔

About admin

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc