گلگت بلتستان کابینہ میں فرشتہ صفت وزیر بے محکمہ کا انکشاف اور حکومتی تائید۔

گلگت( تحریر نیوز) گزشتہ دنوں حکومت میں موجود ایک ایسے شخص کے حوالے سے سوشل میڈیا پر شور ہوا جو نہ تو عوامی نمائندے ہیں اور نہ ہی اُنکے پاس کوئی بڑا سرکاری عہدہ ہے لیکن وہ ہمیشہ حکومتی اگلی صفوں میں نظر آتا ہے۔ اس حوالے سے ترجمان حکومت گلگت بلتستان نے آج سوشل میڈیا پر پالیسی بیان جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ راجا نظیم الامین گلگت بلتستان کابینہ سے منظور شدہ صوبائی وزیر کے برابر اعزازی سٹیٹس رکھتا ہے اور بورڈ آف انوسٹمنٹ گلگت بلتستان کے وائس چئیرمین ہے. مراعات وہ نہیں لیتا مگر کابینہ ممبر کے برابر سٹیٹس رکھتا ہے۔

سوال یہ ہے کہ یہ فرشتہ صفت انسان نہ مراعات لیتا ہے اور نہ ہی افیشل وزارت کا عہدہ رکھتے ہیں لیکن سرکاری پروگرامز اور میٹنگوں اور ملکی اور غیر ملکی دورں میں عوامی نمائندوں سے بھی اگلی صف میں وزیر اعلیٰ کے ساتھ نظر آتا ہے، ایسے میں جو عہدہ اُنکو ایک عوامی خدمت گار کے طور پر سرکار نے دیا ہے وہ فرائض انجام دینے کے بجائے وہ اس میں سیاسی جلسوں اور میٹگبز میں مسلسل شرکت سوالیہ نشان ہے۔ عوامی حلقوں کا کہنا ہے کہ کیا وہ وزراء کے ساتھ سفر کرنے اچھے ہوٹلوں میں قیام کرنے سرکاری گاڑیوں میں گھومنے پھرنے غیر ملکی دوروں کا خرچہ بھی اپنے جیب سے کرتے ہیں یا وزیر اعلیٰ کی کچن کبنٹ میں غیراعلانیہ وزارت کا عہدہ لیکرٹیکنیکل کرپشنز کیلئے اُنکی معاونت کرتے ہیں۔

About admin

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc