وزیر اعظم عمران خان نے پاکستان کے زیرانتظام کشمیر(گلگت بلتستان آذاد کشمیر) میں ریفرنڈم کرانے کی آفر کردی.

اسلام آباد (ٹی این این) چیرمین پاکستان تحریک انصاف اور وزیر پاکستان عمران خان نے پاکستان کے زیر انتظام کشمیر میں ریفرنڈم کرانے کی آفر کردی. تفصیلات کے مطابق وزیر اعظم عمران خان نے غیر ملکی چینل (ڈی ڈبلیو اردو) کو خصوصی انٹرویو دیتے ہوئے عالمی حالات خاص طور پر سعودی عرب اور ایران کے مابین کشیدگی کم کرنے پر زور دیا وہیں کشمیر پر اپنا موقف بیان کرتے ہوئے اُنہوں نے واضح طور پر کہا کہ کشمیر کے عوام کا حق خودارادیت انکا حق ہے لہذا انکو فیصلہ کرنے دیا جانا چاہیے کہ وہ کیا چاہتے ہیں اور پاکستان نے ہمیشہ حق خودارادیت کی بات کی ہے اور ریفرنڈم کرانے کیلیے تیار ہے. انکا کہنا تھا کہ ریفرنڈم ہی ایک حل ہے جس میں ریاست کے عوام کا فیصلہ ہوگا کہ وہ پاکستان میں شامل ہونا چاہتے ہیں یا خود مختار ملک بننا چاہتے ہیں پاکستان دونوں صورتوں میں کشمیری عوام کے ساتھ ہیں.

یاد رہے مسلہ کشمیر کی حل کیلئے پاکستان اور ہندوستان دونوں اقوام متحدہ کے چارٹررڈ کے مطابق حل کا مطالبہ کرتے رہے ہیں لیکن ریاست جموں و کشمیر کی سب سے بڑی اکائی گلگت بلتستان آج تہتر سال بعد بھی اقوام متحدہ کے چارٹررڈ کے 13 آگست 1948 کی بنیاد پر حقوق سے محروم ہیں اور گلگت بلتستان کا عوام کا اولین مطالبہ ہے کہ مسلہ کشمیر کی حل کیلئے سب سے پہلے گلگت بلتستان کو اقوام متحدہ کے چارٹررڈ کے مطابق حقوق دینا لازمی ہے. گلگت بلتستان اسمبلی کے ممبران عوامی ایکشن کمیٹی گلگت بلتستان سمیت کئی مذہبی اور سیاسی جماعتوں کا مسلسل یہی مطالبہ رہا ہے کہ ریفرنڈم سے پہلے گلگت بلتستان کو متنازعہ بنیاد پر حقوق دینا لازمی ہے لہذا گلگت بلتستان کو بھی آزاد کشمیر کی طرز کا ریاستی نظام دیا جائے اور یہی مطالبہ آزاد کشمیر اسمبلی کی جانب سے متفقہ طور پر گزشتہ سال منظور کی تھی اور اقوام متحدہ کے چارٹررڈ کے مطابق بھی پاکستان گلگت بلتستان کو داخلی خودمختاری کا پابند ہے.

About TNN-GB

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc