گلگت بلتستان میں چیف جج سمیت تمام ججز جی بی کونسل تعینات کرتی ہے، ا یگزیکٹو کا ججز تعینات کرنا عدلیہ کی آزادی کے منافی ہے۔سپریم کورٹ میں گرما گرم بحث

اسلام آباد ( نیوز ڈیسک ) گلگت بلتستان کی عدالتوں میں ججز تعیناتی سے متعلق آج سپریم کورٹ میں کیس کی سماعت ہوئی سپریم کورٹ نے اٹارنی جنرل سمیت تمام فریقین کو نوٹس جاری کر دیے. وکیل درخواست گزار کا کہنا تھا گلگت بلتستان میں چیف جج سمیت تمام ججز جی بی کونسل تعینات کرتی ہے، جس پر سلمان اکرم راجہ کا کہنا تھا ایگزیکٹو کا ججز تعینات کرنا عدلیہ کی آزادی کے منافی ہے. وکیل نواز کھرل نے عدالت کو آگاہ کیا کہ گلگت بلتستان بار کونسل نے عدالتی بائیکاٹ کر رکھا ہے، وکیل جی بی بار کونسل نے دلائل دیتے ہوئے کہا کہ حکومت کیپٹن صفدر کے من پسند افراد کو جج لگانا چاہتی ہے، چیف جسٹس نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ گلگت بلتستان پاکستان کا حصہ ہونے پر کوئی تنازع نہیں، یہ حساس ترین معاملہ ہے اس پر کیس کی حد تک گفتگو کرینگے جسٹس عمر عطاء بندیال نے ریمارکس دیئے کہ انصاف کی فراہمی ریاست کی بنیادی ذمہ داری ہے،گلگت بلتستان پر ہمسایہ ملک کے ساتھ تنازع چل رہا ہے جس پر سلمان اکرم راجہ نے دلائل دیتے ہوئے کہا کہ عدالتی فیصلے سے عالمی فورم پر پاکستان کا موقف مضبوط ہوگا، چیف جسٹس نے ریمارکس دیئے کہ اعتزاز احسن اور خواجہ حارث کو عدالتی معاون مقرر کیا ہے، عدالت نے سماعت 14 نومبر تک ملتوی کر دی، اٹارنی جنرل کو خود پیش ہونے کی ہدایت جاری۔

About admin

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc