گلگت بلتستان پر احسان صرف اللّٰہ کا ہے۔

جب جب گلگت بلتستان کی خوبصورتی وہاں کے قدرتی وسائل اور لوگوں کی بات ہوتی ہے تو سب سے پہلے اپنے رب کا شکر ادا کرتا ہوں اور سوچتا ہوں کہ شاید ہم لاپروا اور ناشکرے ہیں ۔دُنیا کے کسی بھی ملک میں گلگت بلتستان کو سیاحت کے لیے بہترین اور موزوں خطہ قرار دیا جاتا ہے تو اس کی وجہ عمران خان یا حافظ الرحمن نہیں بلکہ گلگت بلتستان کی خوبصورتی(نیچرل بیوٹی) دُنیا کی بلند ترین چوٹیاں ہیں جو گلگت بلتستان میں واقع ہیں، قدرتی جھیلیں یہاں کی تاریخی ثقافت اور خوبصورت لوگوں کی وجہ سے دُنیا میں بہترین خطہ قرار دیا جاتا ہے۔ یہ سب کسی نئے یا پرانے پاکستان کے حکمرانوں نے نہیں دیا بلکہ یہ سب ہمیں ربّ العالمین نے عطا کیا ہے۔ ہمیں اُس ربّ العالمین کا ہر وقت شُکر ادا کرنا چاہئےگلگت بلتستان کے عوام کو بہادری و شجاعت کی وجہ سے جانا جاتا ہے تو اُس میں کسی سیاستدان کی نہیں بلکہ میرے رب کی کرپا ہے۔لیکن پتہ نہیں کیوں ہم اپنے آپ کو اتنا سادہ اور بیوقوف بنانے پر تُلے ہیں کہ جب کوئی سیاستدان چاہے وہ وفاق سے آیا ہو یا مقامی وہ گلگت بلتستان کے خوبصورتی کی تعریف کرتا ہے تو ہم کھڑے ہو کر اُس کے لیے تالیاں بجاتے ہیں اور نعرہ بازی کرتے ہیں۔ احسان ربّ نے کیا کریڈٹ ہم سیاستدانوں کو دیتے ہیں۔آج گلگت بلتستان متنازعہ خطہ ہے اس کا کریڈٹ بے شک آپ ان سیاستدانوں کو دیں۔آج اگر گلگت بلتستان کے حقوق نہیں مل رہے ہیں تو اُس کا بھی کریڈٹ آپ ریاست کے حکمرانوں کو دیں۔آج گلگت بلتستان کے ہزاروں طلبہ پاکستان کے مختلف شہروں میں تعلیم کے سلسلے میں ٹھوکرےکھا رہے ہیں تو اس کا کریڈٹ آپ سیاسدانوں کو دیں۔آج اگر گلگت بلتستان صحت کی سہولیات سے محروم ہے تو اس کا کریڈٹ آپ ان نا اہل سیاسدانوں کو دیں۔آج گلگت بلتستان میں لینڈ مافیا سرگرم ہے تو اُس کا کریڈٹ آپ سیاسدانوں کو دیں۔گلگت بلتستان کے عوام کو فرقوں میں تقسیم کرنے کا کریڈٹ سیاسدانوں کو دیںگلگت بلتستان کے عوام کو آرڈر کے ذریعے 72 سال آئینی حقوق سے محروم رکھنے کا کریڈٹ ریاست کے حکمرانوں کو دے دیں۔آپ کا علاقہ خوبصورت ہے تو اُس خوبصورتی میں سیاستانوں کا کردار کتنا ہے اُس کا اندازہ لگا کر آپ کریڈٹ دیں۔
تحریر: صلاح الدین

About TNN-GB

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc