اقوام متحدہ اور UNCIPکی قراردادوں کےمطابق آئین ساز اسمبلی کیلئے انتخابات کرائیں،جو ہر علی خان ایڈووکیٹ کی برسی کے موقع پر مطالبہ۔

گلگت(خصوصی رپورٹ)گلگت بلتستان کے معروف قوم پرست و حق پرست رہنماء جو ہر علی خان ایڈووکیٹ کی برسی کے موقع پر ان کے مزار پر جوہر میموریل سوسائٹی اور گلگت بلتستان بچاؤ تحریک کے زیر اہتمام تعزیتی تقریب کا انعقاد کیا گیا۔ تقریب میں سابق صوبائی وزیر دیدار علی،سینئر قانون دان گلگت بلتستان احسان علی ایڈووکیٹ، معروف قوم پرست رہنماء انجینئر شجاعت علی خان، معروف دانشور و سماجی شخصیت شامون،حسنین رمل، نصرت حسین و دیگر لوگوں نے کثیر تعداد میں شرکت کی۔تقریب میں مشترکہ طور پر قرار داد پیش پاس کرتے ہوئے کہا گیا کہ گلگت بلتستان کے عوام کو حکم نامے اور مذید غلامانہ و جبری نظام کے ذریعے بنیادی انسانی،سیاسی حقوق سے محروم رکھنے کے بجائے اقوام متحدہ اور UNCIPکی قراردادوں کے تحت فوراً آئین ساز اسمبلی کیلئے انتخابات کرائیں جائیں تاکہ یہاں کے عوام اپنے اجتماعی سیاسی، معاشی و اقتصادی حقوق کی تحفظ کیلئے ایک آئین مرتب کرسکے۔قرارداد میں مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ قراقرم یونیورسٹی کو قائد گلگت بلتستان جوہر علی خان کے نام سے منسوب کیا جائے تاکہ علاقے کے لوگ اور آنے والے نسلوں کو علاقے کیلئے دی جانے والی قربانیوں کا ادارک ہوسکے۔گلگت بلتستان کو برسوں سے دیئے جانے والے پیکیجز اور آرڈرز کو مسترد کرتے ہوئے جی بی کو حاصل سلف گورنمنٹ کے تحت اپنی آئین مرتب کرنے کیلئے فوری اقدامات کرنے کی ضرورت ہے۔

About TNN-GB

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc