عوامی ایکشن کمیٹی بلتستان نے ماورائے آئین کسی بھی قسم کے آرڈر کو مسترد کرنے کا اعلان کردیا۔

سکردو(پ،ر)عوامی ایکشن کمیٹی بلتستان کا ہنگامی اجلاس مقامی ہوٹل میں زیر صدارت محمدعلی دلشاد ترجمان منعقد ہوا اجلاس میں جی بی آرڈر 2020ء کے حوالے سے ایکشن کمیٹی گلگت؛ (گلگت) کی جانب سے جاری اعلامیہ پر ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے شرکاء نے کہا کہ آرڈر 2020ء کے خلاف احتجاجی تحریک کی حد تک ایکشن کمیٹی بلتستان حمایت کرتی ہے لیکن سپریم کورٹ کی مشاورت و ہدایات کی روشنی میں مسئلہ کشمیر کا حل ممکن نہیں کیونکہ ایکشن کمیٹی گلگت کا مطالبہ براہ راست عبوری سیٹ اپ کی جانب پیشقدمی ہے. ایکشن کمیٹی بلتستان کا واضح موقف ہے کہ مسئلہ کشمیر ایک بین الاقوامی ایشو ہے جس کے حل کیلئے اقوام متحدہ نے بالکل سادہ اور شفاف احکامات واضح طور پر جاری کر دئیے ہیں کہ متنازعہ خطے کے باسیوں کو یہ اختیار دیے جائیں کہ آزادانہ طور پراپنے مستقبل کے فیصلہ کر سکیں . اس تناظر میں ہندوستان اور پاکستان براہ راست متنازعہ خطے کی قسمت کا فیصلہ نہیں کر سکتے. جب تک رائے شماری نہ ہو کوئی بھی عبوری سیٹ اپ یا آرڈر قابل قبول نہیں. اہل بلتستان ماورائے آئین کسی بھی آرڈر کو مسترد کرتے ہیں.

About TNN-GB

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc