ڈپٹی اسپیکر قانون ساز اسمبلی جعفر اللہ خان کون ہے رکن قانون ساز اسمبلی نے میڈیا کے سامنے واضح کردیا۔

گلگت ( تحریر نیوز) گلگت بلتستان قانون ساز اسمبلی کے باہر میڈیا سے بات کرتے ہوئے رکن قانون ساز اسمبلی کپٹن ریٹائرڈ محمدشفیع نے جعفر اللہ خان کے اُس بیان پر جس میں اُنہوں نے کہا تھا کہ گلگت بلتستان متنازعہ خطہ نہیں بلکہ پاکستان کا باقاعدہ حصہ ہے کہا تھا، پر رائے دیتے ہوئے کہا ہے کہ جعفراللہ خان سیاست میں بچہ ہے اور بچہ کچھ بھی کہہ سکتا ہے ۔یہ بات ایک حقیقت ہے کہ گلگت بلتستان ایک متنازعہ خطہ ہے اس وجہ سے پاکستان کے سینٹ اور قومی اسمبلی میں اس خطے کے عوام کی بار بار مطالبے کے باوجود نمائندگی نہیں دیا جارہی ہے اور اس حوالے سے سپریم کورٹ آف پاکستان کا فیصلے موجود ہیں اور پاکستان کے اعلیٰ قیادت بھی ہمیشہ سے یہی کہتے رہے ہیں کہ گلگت بلتستان قانونی اور آئینی طور پر باقاعدہ پاکستان کا حصہ نہیں بلکہ ایک متنازعہ خطہ ہے۔
اُنہوں نے مزید کہا ہماری تمام تر محبتوں کے باوجود یہ بات پاکستان ہندوستان اور اقوام متحدہ کے درمیان متفق اور تسلیم شدہ فیصلہ ہے کہ گلگت بلتستان متنازعہ علاقہ ہے اور اس خطے کی قسمت کا فیصلہ اُس وقت تک ممکن نہیں جب تک مسلہ کشمیر کی حل کیلئے اقوام متحدہ کی نگرانی میں رائے شماری نہیں ہوتی۔ لہذا ہمارا مطالبہ ہے کہ اگر گلگت بلتستان کو پانچواں آئینی صوبہ بنانے میں قوانین اور مسلہ کشمیر رکاوٹ ہے تو گلگت بلتستان کوآذاد کشمیر کی طرز پر اُن سے بااختیارانتظامی سیٹ اپ دیں جس میں اختیارات گلگت بلتستان کے عوامی نمائندوں کے پاس ہو۔ ایسا کرنے کی صورت میں نہ ہی کشمیر کاز کا نقصان پونچے گا اور نہ ہی خارجہ پالیسی پر منفی اثر پڑھ سکتا ہے بلکہ سی پیک کے حوالے پاکستان دشمن قوتوں کو اس ایشو کے نام پر پاکستان کو غیر مستحکم کرنے کی سازشیں بھی مکمل طور پر آخری انجام کو پونچ سکتاہے۔

About admin

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc