تازہ ترین

گلگت بلتستان کے طالب علم کو شناخت پوچھ کر لاہور میں اوباش لڑکوں نے نشانہ بنا دیا

لاہور( ٹی این این ۔محمد کامران) لاہور میں ایک اور بلتی سٹوڈنٹ بے ہیمانہ تشدد کی زد میں۔گزشتہ شب پیش آنے والے اس واقعے نے گلگت بلتستان سے تعلق رکھنے والے طلبہ میں ایک بار پھر اضطراب کی کیفیت پیدا کیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق گزشتہ رات کو ایک نویں جماعت کے طالب علم کو رات اس وقت تشدد کا نشانہ بنایا جب وہ گھر سے روٹیاں لینے کے لئے گیا اور کچھ اوباش لڑکوں نے پہلے اس کی شناخت پوچھی اور جب اس نے کہا کہ وہ بلتی ہے تو بلاوجہ تشدد کا نشانہ بنایا۔اس حوالے سے جب پولیس سے رابطہ کیا تو پنجاب پولیس اپنی روائتی ہٹ دھرمی کا مظاہرہ کرتے ہوئے ملزمان کو پکڑنے کے بجائے دو اور بلتی لڑکوں کو تھانے میں بند کر کے ان پر مقدمہ بنانے کی دھمکی دی اور ملزمان ہمیشہ کی طرح قانون کی گرفت سے آزاد پھرتےہے۔ لاہور میں مقیم طلبہ نے اس حوالے سے اعلی حکام سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے اور وزیر اعلی پنجاب سے فوری نوٹس اور کارروائی کا مطالبہ کیا یاد رہے گزشتہ سال دلاور عباس لاہور میں مقامی لوگوں کے بے ہیمانہ تشدد سے شہید ہوا تھا۔

About TNN-ISB

One comment

  1. Koi naam aur adress ju??? Jaga Agar kisi ny help karni ho inn Larkon ky

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*