فیڈرل یونین آف جرنلسٹ راولپنڈی،اسلام آباد نے حکومت گلگت بلتستان کے خلاف طبل جنگ بجادی۔

اسلام آباد( تحریر نیوز) انسداد دہشت گردی عدالت گلگت کی جانب سے وومن ٹریفکنگ اسکینڈل کو بے نقاب کرنے والے صحافی کے خلاف گلگت میں درج آیف آئی آر کی پیروی نہ کرنے پر نوٹس جاری کرتے ہوئے ایک ہفتے کے اندر عدالت میں حاضر ہونے کا حکم دیا تھا۔ اس حکم نامے پر گلگت بلتستان کے صحافتی نتظیموں نے خیر ہمیشہ کی طرح اس مرتبہ بھی کوئی احتجاج نہیں کیا۔البتہ موصوف صحافی چونکہ پنڈی میں مقیم ہیں اور گلگت بلتستان کے وزراء اور بیورکریسی کے اسکینڈل کی خبر کو سب سے پہلے اسلام آباد کے انگریزی روزنامچے نے شائع کی تھی، یہی وجہ ہے کہ اسلام آباد میں فیڈرل یونین آف جرنلست راولپنڈی، اسلام آباد اس اقدام کو صحافی سے انتقامی کاروائی قرار دیکر حکومت گلگت بلتستان سے شدید احتجاج کرتے ہوئے اس قسم کے اوچھے ہتکنڈوں سے باز رہنے کی تنبیہ کی ہے۔

یونین کے صدر افضل بٹ نے پریس ریلیز کے کے ذریعے حکومت گلگت بلتستان کو پیغام دیا ہے کہ اگر گلگت بلتستان کی مقامی حکومت نے کیس واپس نہ لیا تو اسلام آباد میں نون لیگ کی مرکزی حکومت کے خلاف بھرپور احتجاج کیا جائے گا۔

یاد رہے پی ایف یو جے نے اس پہلے بھی وفاقی وزیر اطلاعات کے سامنے وومن ٹریفکینگ کی غیرجانبدارنہ تحقیقات، ڈی جے مٹھل کی رہائی اور بانگ سحر اخبار پر پابندی ہٹانے کا مطالبہ کیا تھا لیکن اس وقت تک کوئی اپ ڈیٹ نہیں۔

About admin

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc