محرم الحرام کےمہینے میں گلگت بلتستان مختلف علاقوں میں مانسہرہ سے بیماراور حرام جانوروں کے مضرصحت گوشت سپلائی کا خدشہ، ذمہ دار اداروں کے کانوں کان خبر نہیں۔

سکردو( تحریر نیوز) محرم الحرام کے میں بھی گلگت بلتستان کے عوام کو حرام اور مضر صحت مرغیوں کے فیروزن گوشت سپلائی کیا جارہا ہے، حکومت کو اس سلسے میں بڑے پیمانے پر کریک ڈوان کرنے کی ضرورت ہے۔

عوام اور قصائی مارکیٹ کے کئی گوشت فروخت کرنے والے دوکانداروں نے انکشاف کیا ہے کہ سکردو اور گلگت میں قائم فیروزن کمپنیاں جو مانسہرہ سمیت ملک کے دیگر صوبوں سے فروزن گوشت منگواتے ہیں،جن میں مانسہرہ کے بیمار اور حاملہ بھینسوں سمیت حرام مرغیوں کا مضر صحت اور بدبو دار گوشت گلگت سے سکردو سمیت تمام اضلاع کو بغیر کسی ڈر خوف کے سپلائی کیا جارہا ہے۔ گلگت بلتستان میں چیک اینڈ بیلنس کا موثر نظام نہ ہونے کے باعث مضر صحت اور بدبودار گوشت کے استعمال سے روزانہ سینکڑوں کے حساب سے حالت غیر ہونے کے واقعات روز کے معمول بن گئے ہیں جبکہ مضر صحت حرام اور بیمار جانوروں کے گوشت کے استعمال سے دل کے امراض میں اضافہ ہونے لگا ہے۔

About admin

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc