عوامی زمینوں پر بلامعاوضہ قبضہ کسی بھی صورت منظور نہیں،حکومت اس معا ملے میں جبر سے اجتناب کرے ، بلتستان میں تکفیری سوچ کے حامل افراد کو زمینوں کی فروخت اور کاروباری لین دین حرام ہے۔ علامہ شیخ محمد حسن جعفری

سکردو( نامہ نگار) قائد بلتستان خطیب مرکزی جامع مسجد سکردو علامہ شیخ محمد حسن جعفری نے ایک بار پھر عوام اور حکومت کو سخت تنبیہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ بلتستان ریجن میں متعصب افسران کے ساتھ رسم راہ لین دین اور زمینوں کی فروخت حرام ہے۔ مرکزی امامیہ جامع مسجد میں خطبہ جمعہ سے خطاب کرتے ہوئے اُنہوں نے حکومت گلگت بلتستان کو خبرادر کرتے ہوئے تنبیہ کیا ہے کہ براہ راست عوام سے مربوط پراجکٹس کے علاوہ کسی بھی مقامی اور غیر مقامی گروہ کو زمین دینے کی کوشش کی تو سخت ردعمل کا مظاہرہ کرینگے۔ اُنہوں نے مزید کہا کہ چھومک تھنک ہو یا گوہری تھنگ انتظامیہ عوامی اُمنگوں کے مطابق مسلے کا حل تلاش کریں تاہم معاوضے کے بغیر زمین ہتھیانے کی کوشش ذیادتی ہے اور ہم اس ذیادتی کے خلاف کھل کر مزاحمت کریں گے۔

یاد رہے ڈسٹرک ہیڈکوارٹر کھرمنگ کیلئے منتخب شدہ میدان دو علاقوں کے درمیان متنازعہ ہے اس بناء پر ایک فریق نے دوسرے کی مخالفت میں بلامعاضہ دینے کی آفر کی ہے جبکہ اُس زمین پر قابض اہلیان گوہری نے ہٹ دھرمی کا مظاہرہ کرتے ہوئے معاوضہ دینے کی صورت میں بھی اُس میدان نے دستبرادر نہ ہونے کا فیصلہ کیا ہے۔ دوسری طرف ڈی سی کھرمنگ نے اس زمین کو سرکاری قرار دیکر اگلے ایک ہفتے میں خالی کرنے کی الٹی میٹم دی ہے اور خفیہ اداروں کی جانب سے اس معاملے میں متحرک گوہری سے تعلق رکھنے والے سرکاری ملازمین کی لسٹ تیار کرنا شروع کیا ہے۔

About admin

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc