گلگت بلتستان کے عوامی بجٹ سے افسران کیلئے قیمتی فونز کی خریداری،سوشل میڈیا پر شدید تنقید۔

گلگت(خصوصی رپورٹ) گلگت بلتستان کے سرکاری خزانے سے سرکاری ملازمین کو قیمتی موبائل فون خریدنے کی خبرکے بعد سوشل میڈیا پر ایک ہنگامہ کھڑا ہوگیا۔ تفصیلات کے مطابق گلگت بلتستان کے40سرکاری افسروں کے لئے سامسنگ کمپنی کے جدیدمہنگے موبائل فون(NOTE-8)خریدنے کافیصلہ کیا ہے ۔جنرل ایڈمنسٹریشن ڈیپارٹمنٹ کی جانب سے جاری آرڈرکے مطابق چیف سیکرٹری سے ڈپٹی کمشنرتک کے سرکاری افسران کے لئے سامسنگ نوٹ ایٹ یا92ہزارروپے مالیت کے کوئی اورموبائل فون خریدنے کافیصلہ کیاگیا ہے۔سرکاری آرڈرکے مطابق موبائل فون کی خریداری کے لئے فنڈزکااہتمام گلگت بلتستان کے مالی سال2018-19کے بجٹ سے کیاجائے گا۔سرکاری افسران کے لئے مہنگے موبائل فون کی خریداری پر39لاکھ روپے سے زائد لاگت آئے گی۔یہ لاگت عوامی بجٹ سے پوری کی جائے گی۔
سوشل میڈیا پر صارفین کی جانب سے شدید تنقید کیا نشانہ بنایا جارہا ہے سوشل میڈیا صارفین کا کہنا ہے جس خطے میں عوام آج بھی بنیادی تعلیمی صحت جیسے سہولیات سے محروم ہو اُس خطے میں پورے پاکستان سے ہٹ کر اس قسم کی عیاشی اس بات کو ثابت کرتی ہے کہ گلگت بلتستان میں حکومت کے نام پر چند افراد کو عیاشی کیلئے موقع فراہم کی ہوئی ہے، سوشل میڈیا صارفین کا کہنا ہے 40 سرکاری آفسروں کو 39 لاکھ کا موبائل خریدنے کے بجائے گلگت بلتستان کے پرائمری سکولوں کو کرسیاں خریدا جائے 39 لاکھ سے 3250 کرسیاں خریدی جا سکتی ہے۔ جبکہ دور دراز علاقوں میں آج بھی علاج کی سہولت میسر نہیں ،ایمبولنس نہ ہونے کی وجہ سے عوام بیماری اور حادثات کے واقعات پر کاندھوں سے اُٹھا کرمریضوں ہستپال پونچانے کے واقعات معمول کی بات ہے لیکن گلگت بلتستان میں عوام مسائل سے غافل افسر شاہی کا اس قسم کے عیاشیوں پر کوئی پوچھنے والا نہیں۔ سوشل میڈیا صارفین کا کہنا ہے کہ گلگت بلتستان کو بنیادی حقوق سے محروم رکھ کر ایک طرح سے چراگاہ بنایا ہوا ہے جہاں عوام کو جینے کیلئے مرنا پڑتا ہے لیکن حکومت کو عوامی تکلیف کا احساس ہی نہیں، سوشل میڈیا پر نیب سے مطالبہ کیا جارہا ہے کہ اس قسم کے کرپشن کی روک تھا کیلئے اقدمات اُٹھائیں۔

About TNN-ISB

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc