چھلت پائین ضلع نگر کے پانچ سو گھرانوں کے لئے ایک سول ڈسپنسری کا قیام عمل میں لایا جائے۔قادر شاہ سابق صدر پی پی پی تحصیل چھلت شینبر ۔

نگر ( اقبال راجوا) محکمہء صحت اور ممبر قانون ساز اسمبلی سے مطالبہ کرتے ہیں کہ چھلت پائین کے پانچ سو گھرانوں کے لئے ایک سول ڈسپنسری کا قیام عمل میں لایا جائے۔قادر شاہ سابق صدر پی پی پی تحصیل چھلت شینبر کا مطالبہ۔ انہوں نے مذید کہا کہ چھلت پائین ضلع نگر کا سب سے گنجان آباد او پہلا ٹاؤن ہے ۔ چھلت پائین میں ڈسپنسری نہ ہونے کے سبب غریب عوام بنیادی صحت کے لئے ہزاروں روپے خرچ کر کے کئی میل دور جانے پر مجبور ہو رہے ہیں، بیس سال قبل جب اس گاؤں کی آبادی ایک سو بیس گھرانوں پر مشتمل تھی تب اس علاقے میں بنیادی صحت کی فراہمی کے لئے ایک فرسٹ ایڈ پوسٹ FAP کا قیام عمل میں لایا گیاجو ابھی تک قائم ہے۔ قابل ذکر بات یہ ہے کہ چھلت پائین میں ٹاؤن ایریاء میں آبادی زیادہ ہونے کے سبب جانوروں کے لئے تو بڑا ہسپتا ل قائم ہے لیکن انسانوں کے لئے صرف ایک ایف اے پی ہے۔ ہم ممبر قانون ساز اسمبلی جاوید حسین اور محکمہء صحت کے اعلیٰ حکام سے مطالبہ کرتے ہیں کہ ہمارے علاقے کے لئے ایک سول ڈسپنسری فوری طور پر قائم کیا جائے ۔ ہمارے لوگ بہت غریب ہیں علاج معالجے کے لئے ان کے پاس اضافی اخراجات نہیں ہو تے ہیں ۔ معمولی سر درد یا کسی مرہم پٹی کے لئے ان لوگوں کو گاڑی کرائے پر حاصل کرکے کئی میل دور رورول ہیلتھ سینٹر جا نا پڑتا ہے ۔ ہم ایم ایل اے حلقہ چار نگرجاوید حسین سے بھی یہ مطالبہ کرتے ہیں کہ وہ اس سلسلے میں اپنی اقدامات کو یقینی بنائیں۔

About admin

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

apental calc