تازہ ترین

گورنر گلگت بلتستان کا بیٹا سلاخوں کے پیچھے ، مسلم لیگ نون حفیظ الرحمن گروپ میں جشن کا سماں۔

اسلام آباد(نامہ نگار خصوصی)ہنزہ سے منتخب ہونے والے ممبر گلگت بلتستان قانون اسمبلی اور ممبر قانون ساز اسمبلی رانی عتیقہ اور گورنر گلگت بلتستان کے بیٹے پرنس سلیم خان کو جائداد کی لین دین میں فراڈ کرنے کی پاداش میں اپنے والد میر غضنفر علی کی مدعیت پر اسلام آباد پولیس نے گرفتارکرکے سلاخوں کے پیچھے دھکیل دیا۔یاد رہے اسلام آباد بنگلہ کی ملکیت کے معاملے پر اس سے پہلے بھی میر فیملی اسلام آباد میں گلگت بلتستان کا تماشا کرچُکے ہیں جسےاسپیکر قانون ساز اسمبلی کے اسپیکر فدا محمد ناشاد، رکن قانون ساز اسمبلی راجہ جہانگزیب اور دیگر گلگت بلتستان کے منتخب نمائندوںنے صلح صفائی کرایاتھا۔ لیکن اچانک میر غضنفر نے اپنے ہی بیٹے کو پولیس سے گرفتار کروا کر گلگت بلتستان کے عوام کی توہین کی ہے۔ کیونکہ یہ وہی لوگ ہیں جو ایک ہی گھر سے تین افراد اس وقت گلگت بلتستان قانون ساز اسمبلی کے اہم رکن ہیں۔میر غضنفر علی خان گورنر گلگت بلتستان کے اس اقدام پر سوشل میڈیا پر ہنزہ نے تعلق رکھنے والوں خاص طور پر اُنکے ووٹر کی جانب سے انتہائی افسوس کا اظہار کیا جارہا ہے۔ عوامی حلقوں کا کہنا ہے کہ ہنزہ کی عوام نے تو میر غضنفر علی خاں کے بیٹے کو عوامی نمائندگی کیلئے جتوایا تھا لیکن یہ معلوم نہیں تھا کہ وہ اسے اپنے کی والدین سلاخوں کے پیچھے بھیج دیں گے۔ اسلام آباد تھانے کے باہر ہنزہ سے تعلق رکھنے والے کچھ نواجوانوں کا کہنا ہے تھا کہ میر شاہ سلیم خان کی گرفتاری کے اصل ذمہ دار میر سلمان خان اور ان کی ہی والدہ عتیقہ اور ان کے کچھ دوستوںہیں جو گورنر گلگت بلتستان کے کان بھرتے ہیں اور کوئی بھی موقع ہاتھ سے جانے نہیں دیتے ہیں۔ ،عوامی حلقوں کا کہنا ہے کہ گورنر گلگت بلتستان میر غضنفر علی خاں اوررانی عتیقہ کو اپنے گھر کے مسائل اپنے گھر میں ہی حل کرنا چاہیے نہ کہ اس طرح اسلام آباد میں اہلیان ہنزہ کے ووٹ کی توہین کرتے۔
دوسری طرف اہم اطلاع یہ ہے کہ اُنکی گرفتاری کے خبر پر وزیر اعلی گلگت بلتستان کے حلقوں نے شادیانے بجانا شروع کیا ہے ۔ کیونکہ عدم اعتماد تحریک میں میر سلیم خان اور رانی عتیقہ بھی اہم کردار تھی جو اب ماند پڑنے کا امکان ہے۔ حفیظ الرحمن کے قریبی حلقے کے اہم ذمہ دار کا کہنا تھا کہ حفیظ الرحمن اس سارے معاملے پر دور بیٹھ نظارہ کررہے ہیں اور گھریلو معاملے کانام دیکر خوب انجوائے کررہے ہیں کیونکہ اس تنازعے نے عدم اعتماد تحریک کو بھی ایک طرح سے کمزور کیا ہے۔ دوسری طرف جاوید حسین جو عدم اعتماد تحریک کے مزکری کردار ہیں اُنہوں نے میر سلیم کی گرفتاری کو گلگت بلتستان کے عوام کی توہین قرار دیا ہے حالانکہ ایسی کوئی بات نہیں کیونکہ والد کی مدعیت پر پولیس نے بیٹے کو گرفتار کیا ہے ۔

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

About TNN-ISB

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*