تازہ ترین

قصور واقعے پر قومی اسمبلی میں تحریک التوا جبکہ سینیٹ میں توجہ دلاؤ نوٹس جمع۔

اسلام آباد (مانیٹرینگ ڈیسک) پاکستان پیپلزپارٹی کے عمران ظفرلغاری، شازیہ مری، بیلم حسنین، نفیسہ شاہ اورعذرا فضل نے قصور واقعے پر قومی اسمبلی میں تحریک التوا جمع کرائی ہے۔ جب کہ پاکستان پیپلز پارٹی کی سینیٹر شیری رحمان نےاسی واقعے پر سینیٹ میں توجہ دلاؤ نوٹس جمع کرایا ہے۔ قومی اسمبلی میں جمع کرائی گئی تحریک التوا میں کہا گیا ہے کہ  واقعہ حکومت وقت کی طرف سے ناکافی انتظامات کی طرف اشارہ کرتا ہے، افسوس ہے کہ قصورمیں بار بار ایسے گھناؤنے جرم دہرائے جا رہے ہیں،  کارروائی روک کر زینب کے ساتھ ہونےوالے اندوہناک واقعہ اور بہیمانہ قتل پر بحث کی جائے۔دوسری جانب سینیٹر شیری رحمان کی جانب سے جمع کرائے گئے توجہ دلاؤ نوٹس میں کہا گیا ہے کہ قصور میں بچی کو زیادتی کا نشانہ بنا کر قتل کردیا گیاہے۔ ایک سال میں قصور میں اس طرح کے 10 واقعات پیش آئے ہیں۔  2015میں ایک گینگ نے  280 بچوں کو اغوا کرکے جنسی تشدد کا نشانہ بنایا تھا، قصور واقعے پر وزیر قانون و انصاف ایوان میں جواب دیں۔ واضح رہے کہ ننھی زینب کے ساتھ پیش آنے والے واقعے پر سندھ اسمبلی میں بھی مذمتی قرارداد جمع کرائی گئی ہے۔

About Muhamamd

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*