تازہ ترین

صبر و شکر قوم کے لیے لازم و ملزوم ہے

صبر و شکر ایک مسلمان کے ایسے اوصاف ہیں ۔ جو ایمان کے کامل ہونے کی دلیل ہوتے ہیں ۔ دنیا کی زندگی میں انسان کو جو حالات پیش آتے ہیں ۔ وہ بعض اوقات تکلیف دہ اور بعض اوقات بہت اچھے ہوتے ہیں ۔ ان دونوں صورتوں میں مومن کو صبر و شکر کا رویہ اختیار کرنا چاہیے۔ اور اپنے ملک کی بہتری کا سوچنا چاہیے۔ ہم پاکستانی قوم جس نے بے شمار قربانیوں اور مشکلات سے یہ وطن عزیز حاصل کیا ۔ اور تاریخ بتاتی ھے کہ ہمارے آباوْ اجداد نے مشکل سے مشکل حالات میں بھی اپنے ملک کے مفاد کو مقدم رکھا اور اس کی بہتری اور ترقی کے لیے ہمیشہ جدوجہد مسلسل کرتے رہے۔آج ملک ترقی اور جدید علوم کی طرف گامزن ہے ۔ مگر ہم میں صبر و شکر کی بہت کمی ہو گئی ہے۔ کسی بھی مسلۂ پر صبر سے کام لینے کی بجائے ملک کو فساد ، قتل و غارت اور دھرنوں جیسی صورت حال میں ڈال دیتے ہیں ۔ اور مسئلہ حل کرنے کے بجائے حالات خراب تر کر دیتے ہیں گو یا ہم اس ملک کے بانیوں کا شکر ادا نہیں کرتے ، جن کی وجہ سے ہمیں آ زادی اور آ زادی رائے ملی ہے ۔
اگر حالات یہی رہے تو ہم پستی کی طرف بڑھتے جا ئیں گے۔ صبرو شکر نہ کرنے اور اپنے حالات دن بدن خراب کرنے کی وجہ سے ہمارے دشمن ممالک ہمیں مزید تباہ کرنے کی سازشوں میں کامیاب دکھائی دیتے ہیں۔ گویا ہمیں بر وقت صبر و شکر کے فارمولے پر عمل پیرا ہونا چاہیے تا کہ دشمن کے بدترین ارادے کامیاب نہ ہو سکیں۔ اور ہم اقوام عالم میں ایک با عزیت قوم کی طرح اپنا رول ادا کرتے رہیں۔
محمد جواد اعظم آئیر یونیورسٹی اسلام آباد

  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

About admin

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*