تازہ ترین

بی اینڈ ار کے چیف انجینئر اور ای سی ٹھیکیداروں کی گروپ بندی کے سامنے بے بس بلتستان میں ترقیاتی کاموں کے حوالے سے عوام کو بری خبر

سکردو(ٹی این این) سکردو محکمہ تعمیرات عامہ نے 60 سے زائد ٹینڈرز پچھلے 9 ماہ سے روک کر رکھا ہوا ہے جس کی وجہ سے بلتستان میں ترقیاتی کام ملکل طور پر روک گیا ہے مزدور طبقہ بے روزگار ہوچکے ہیں ذرائع کا کہنا ہے کہ تمام ٹینڈرز خرید و فروخت ہوچکی ہے اصل مسئلہ کنٹریکٹز دو گروپوں میں تقسیم ہونے کی وجہ سے مذکورہ بالا ٹینڈرز تعطل کا شکار ہے متحدہ کنٹریکٹز ایسوسی ایشن اس وقت محکمہ تعمیرات عامہ کے لئے گلے کی ہڈی بنی ہوئی ہے چونکہ ان کے زیادہ تر ٹھیکہ دار پری میں شامل نہیں جس کی وجہ سے انہوں نے نظر ثانی کی درخواست گزارے ہوئے ہیں محکمہ چاہتے ہیں کہ معاملہ افہام و تفہیم سے حل ہو کر پہلے کی طرح ہو لیکن ایسا ہوتا دکھائی نہیں دے رہا جس کی وجہ سے تمام ٹینڈرز لٹکا ہوا ہے اس سلسلے میں چھوٹے ٹھیکیداروں نے آج چیف آفس سکردو کے باہر دھرنا دینے کا اعلان کیا تھا چیف سیکرٹری گلگت بلتستان کا دورے کی وجہ سے بڑی منت سماجت کے بعد ملتوی کرانے میں محکمہ تعمیرات کامیاب ہوئے جس کے لئے پل کا کردار انجنئیر وزیر عدیل شگری صدر پاکستان تحریک انصاف شگر و ممبر بیت المال نے ادا کیا چونکہ موصوف کے کروڑوں کا ٹھیکہ موجود ہے محکمہ نے اس سے فائدہ اٹھاتے ہوئے یہ کام لیا دوسری جانب ان تمام ترقیاتی منصوبے جمود کا شکار ہونے کی وجہ سے آفیسرز آپس میں ایک دوسرے کے دشمن بن گئے ہیں ایگزیکٹو انجنئیر کے بنائے گئے پری چیئرمین پری کوالیفکیشن کمیٹی ایس ای عامر انہیں مسترد کرتے ہوئے اپنے لوگوں کو شامل کرتے ہیں چیف انجینئر وزیر تاجور اپنی مرضی کے مطابق لوگوں کو شامل کرنا چاہتے ہیں جبکہ ان تمام معاملات میں بلتستان سے تعلق رکھنے والے ن لیگ کے ارکان اسمبلی و صوبائی وزراء کہاں پیچھے رہ سکتا ہے اپ ساتھ میں پی ٹی ائی کے بلتستان کے عہدیدار ان کا دباؤ بھی برداشت کرنا پڑتا ہے جس کے نتیجے میں مذکورہ محکمہ کے اندر باہمی چپقلش کی وجہ کھچڑی بنا ہوا جس کا نقصان سب سے بلتستان ریجن کو ہو رہا ہے نہ ہی سیکرٹری تعمیرات ان تمام معاملات میں دلچسپی لیتے ہیں اور نہ ہی ان سب کا باس چیف سیکرٹری نوٹس لیتے ہیں اگر یہی سلسلہ جاری رہا تو مجموعی طور پر بلتستان کو اربوں روپے کا نقصان اٹھانا پڑے گا جس کی تمام تر ذمہ دار مذکورہ آفیسرز ہونگے ۔

  • 10
  •  
  •  
  •  
  •  
    10
    Shares
  •  
    10
    Shares
  • 10
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

About TNN-ISB

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*