تازہ ترین

ضلع کھرمنگ منٹھوکھا بجلی گھر فیز ٹو کے ناقص ہائی ولٹیج تاروں سے اہل علاقہ پریشان،محکمہ برقیات سے بڑا مطالبہ۔

کھرمنگ(ٹی این این) ضلع کھرمنگ منٹھوکھا گیمل بجلی گھر فیز ٹو فنکشنل ہونے کے قریب ہے۔ ایسے میں اہل علاقہ نے محکمہ برقیات گلگت بلتستان سے اپنے شدید خدشات کا اظہار کرے ہوئے بڑا مطالبہ کردیا۔متاثرین نے ہمارے نمائندے خصوصی بات چیت کرتے ہوئے بتایا کہ گیمل بجلی گھر فعال ہونے کے بعد بجلی کے ہائی ولٹیج تاروں کو قدیم بجلی گھر کے تاروں کے ساتھ اُن کے گھروں ، درختوں اور کھتیوں سے گزارا جائے گا اور گلگت بلتستان میں غیر معیاری تاروں کے استعمال کے حوالے سے عوامی سطح پر شدید خدشات پایا جاتا ہے جو کہ کسی بڑے حادثے کا سبب بن سکتا ہے کیونکہ بجلی کے ذیادہ تر ہائی ولٹیج تاروں کو ندیوں کے پانی، لوگوں کے درختوں اور محلوں کے درمیان سے گزار گیا ہے ۔
متاثرین کا کہنا تھا کہ مروجہ قانون کے مطابق اگر محکمہ برقیات کسی کی زمین کے درمیان کھمبہنصب کرنے اور ہائی ویلٹیج تار گزارنے کی صورت میں معاوضہ ادا کرنے کا پابند ہے لیکن آج تک کسی کو ایک روپیہ معاوضہ نہیں دیا گیا بلکہ تیز ہوا چلنے کی صورت میں اگر کسی کے درخت کا تنا تار سے ٹکرا جائے تو بغیر کسی معاوضے اور پیشگی اطلاع کے کاٹ دی جاتی ہے۔ اُنکا کہنا تھا کہ اب گیمل فیز ٹو فنکشنل ہونے کی صورت میں غیرمعیاری تاروں کی وجہ سے خطرناک میں شدید اضافہ ہوا ہے جس سے انسانی جانوں کا بھی ضیاع ہوسکتا ہے۔ اُنکا کہنا تھا کہ عوامی سطح پر متعلقہ بجلی گھر کے ملازمین کو کئی بار توجہ دلانے کے باجود کوئی توجہ دینے والا نہیں لہذا محکمہ برقیات کو چاہئے کہ وہ تمام تاریں کو عوامی درختوں کے درمیاں سے گزارا جارہا ہے اُسے ہٹائیں اور ندی کے درمیان نصب گھمبوں کو نکال کر سڑک کے کنارے نصب کریں کیونکہ اگر خدانخواستہ ہائی ولٹیج تار کٹ کر ندی کے پانی میں گر جائے تو پورا علاقہ اس کے لپیٹ میں آسکتا ہے۔
متاثرین نے وزیر برقیات اور سنئیر وزیر گلگت بلتستان قانون ساز اسمبلی اور وزیر اعلیٰ سے مطالبہ کیا ہے کہ اس اہم ایشو کی طرف برقیات کے افسران کا توجہ دلائیں اور متاثرین ہائی ولٹیج لائن کو انصاف دلائیں اور جن جن افراد اور محلوں سے ہائی ولٹیج گزارا جارہا ہے وہاں سیفٹی کے لوازمات کی موجودگی کو یقینی بنائیں اور فیز ٹو بجلی گھرکا افتتاح ہوتے ہی متاثرین کیلئے کو لوڈشیڈینگ اور بجلی فری فراہم کریں۔

  • 7
  •  
  •  
  •  
  •  
    7
    Shares
  •  
    7
    Shares
  • 7
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

About TNN-GB

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*