تازہ ترین

علمائے امامیہ ضلع شگر نے گلگت بلتستان کو آئینی حقوق سے محروم رکھنے کو عالمی سازش قرار دے دیا۔

شگر(عابدشگری) علمائے امامیہ شگر نے گلگت بلتستان کو آئینی حقوق سے محروم رکھنے کو عالمی سازش قرار دیدی ،سابق چیف جسٹس ثاقب نثار کی جانب سے دی جانے والی فیصلے پر افسوس کا اظہار ،حقوق کے حصول کے لئے گلگت بلتستان کے بچے بچے کو متحد ہونے کی ضرورت پر زور دیا ،جامع مسجد صاحب الزمان چھورکاہ شگر میں نماز جمعہ کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے علمائے امامیہ شگر کے صدر سید طہٰ شمس دین الموسوی نے کہا کہ وفاقی پارٹیاں گلگت بلتستان کے سادہ لوح عوام کی سادگی سے مکمل واقف ہے اس لئے ہر آنے والے انتخابات میں گلگت بلتستا ن کو حقوق دینے کی بات کی جاتی ہے جس سے خوش ہوکر گلگت بلتستان کے عوام اس پارٹی کو مکمل حکومت بنانے کا موقع فراہم کرتے ہیں جس کا کمان وفاق میں ہو لیکن صوبے میں حکومت بنانے کے بعد وفاق گلگت بلتستان کو مکمل بھول جاتے ہیں اسی طرح 70برسوں سے گلگت بلتستان کو آئینی حقوق سے محروم رکھا ہوا ہے حال ہی میں ملک کی سب سے بڑی عدالت میں گلگت بلتستان کے حقوق کا مسئلہ اس امید کے ساتھ لیکر گئے تھے کہ وہاں سے پاکستان سے بے پناہ محبت کرنے والوں کو ان کا صلہ مل جائے گا تاہم عدالت نے گلگت بلتستان کے عوام کی امیدوں پر پانی پھیر دیا انہوں نے کہا کہ گلگت بلتستان کو حقوق سے محروم رکھنا عالمی سازش ہے۔وفاقی پارٹیوں کو گلگت بلتستان سے زیادہ عالمی مفادات عزیز ہے انہوں نے کہا کہ گلگت بلتستان وہ خطہ ہے جنہیں علم بخاوت بلند نہ کرنے کی سزا دی جارہی ہے بعض صوبوں میں علیحدگی جبکہ گلگت بلتستان میں شمولیت کی تحریک چل رہی ہے ا س لئے علیحیدگی تحریک کی دھمکی دینے والوں اور ریاست کے خلاف ہتھیار اٹھانے والوں سے مذاکرات جبکہ گلگت بلتستا ن کے عوام کو دیوار سے لگانے کی سازش کی جارہی ہے انہوں نے کہا کہ گلگت بلتستان میں ائمہ جمعہ کو بھی پابندکرنے کی تیاری کی جارہی ہے تاکہ اس خطے کو بھی فلسطین بنایا جاسکیںانہوں نے کہا کہ گلگت بلتستان کو حقوق حاصل کرنے کے لئے ضروری ہے کہ گلگت بلتستان کا بچہ بچہ متحد ہو تاکہ وفاق اور عالمی طاقتوں سے حق چھین کر لے سکیں ۔

  •  
  • 7
  •  
  •  
  •  
  •  
    7
    Shares

About TNN-GB

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*