تازہ ترین

سکردو میں گاڑی چلانے کیلئے فٹنس ضروری، انتطامیہ نے نیا حکم نامہ جاری کردیا۔

سکردو(ٹی این این) ٹریولز ایجینسیوں کی گاڑیوں کی فٹنس سختی سے چیک کریں۔غیر متعلقہ محکمہ جات کی گاڑیوں سے روٹر ہٹایا جائے۔ مجسٹریٹ اور پولیس وقتا فوقتا ناکے لگائے۔ گاڑیوں کی فٹنس، لائسنس اور کاغذات کی سختی سے چیکینگ کی جائے۔ کم عمر بچوں کی ڈرائیونگ اور بغیر ہیلمٹ موٹر سائیکل سواروں پر سخت پابندی ہے۔ خلاف ورزی کرنے والوں پر جرمانے کئے جائیں۔ ان خیالات کا اظہار اسسٹنٹ کمشنر سکردو نے ٹریفک معمالات پر ہونے والی میٹنگ کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ سکردو ہمیں قانون کی بالادستی کے لئے ملکر لائحہ عمل طے کرنا ہوگا۔ ٹریفک نظام کو بہتر بنانے کےلئے ٹریفک قوانین پر عمل در آمد ضروری ہے۔ انہوں نے کہا کہ بیمار گاڑیوں کی فٹنس کےبغیر روڈ پر چلانے پر پابندی لگائی جائے تاکہ حادثات میں کمی آجائے۔ انہوں نے کہا کہ کم عمر بچوں کی ڈرائیونگ بھی حادثے کا سبب بنتا ہے۔ ان کو بھی روکا جائے۔ غیر متعلقہ محکموں کی گاڑیوں پر روٹر لگانا جرم ہے، فوری طور ہٹایا جائے اور جرمانے بھی عائد کئے جائیں۔ انہوں نے کہا کہ پولیس اور مجسٹریٹ مل کر کام کریں تو شہریوں کے مسائل میں کمی آئے گی۔ انہوں نے کہا کہ شہروں کی طرف سفر کرنے والے بسوں اور بڑی گاڑیوں کی فٹنس سختی سے چیک کیا جائے اور بیمار گاڑیوں کو روڈ پر آنے کہ اجازت نہ دی جائے تاکہ کسی بھی حادثے سے بچ سکیں۔ انہوں نے کہا کہ ٹریفک قوانین کا احترام شہریوں کے مفاد میں ہے۔ قانون کے خلاف ورزی کرنے والوں سے نرمی نہ بھرتی جائے۔ ہماری نرمی سے قانون توڑنے والوں کو مزید حوصلہ ملے گا۔ ان کی حوصلہ شکنی ضروری ہے۔
عوامی حلقوں کا کہنا ہے کہ راولپنڈی کے روٹ پر چلنے والے تمام گاڑیاں بھی شدید خستہ حالی کے شکار ہیں لہذا اس قانون کو سکردو سے پنڈی چلنے والے تمام بس سروس پر بھی لاگو کرکے فوری طور پر ایکشن لینے کی ضرورت ہے تاکہ کسی بھی قسم کے حادثے سے بچ سکے۔یاد رہے پنڈی سے گلگت بلتستان کی طرف چلنے والی بسوں کا ذیادہ تر حادثہ محکمہ ایکسائز غیرفعال ہونے کی وجہ سے خرابی فٹنس کی وجہ سے پیش آتے ہیں۔

  •  
  • 11
  •  
  •  
  •  
  •  
    11
    Shares

About TNN-GB

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*