تازہ ترین

ضلع کھرمنگ میونسپل ایریا کی حد بندی سیاسی اثر رسوخ کا شکار، متاثرین احتجاج کیلئے تیار۔

کھرمنگ(پ،ر) ضلع کھرمنگ میونسپل ایریا کی حد بندی سیاسی اثر روسوخ کا نذر ہوگیا اور میونسپل ایریا کو 50 کلومیٹر طویل علاقےمیں پھیلا دیا جارہا ہے۔ اس حوالے سے ضلعی ہیڈکوارٹر کے عقب کے موضوعات غاسنگ تا ہلال آباد کے عوام میں سخت تشویش پایا جاتا ہے۔ اہل علاقہ کا کہنا ہے کہ ضلعی ہیڈکوارٹر کیلئے یہاں کے عوام کی قربانیاں ہیں اور ہیڈکوارٹر اس علاقے میں ہونے اور متوقع ٹاون ایریا سے علاقے میں معاشی معاشرتی ترقی کی اُمید لگائے بیٹھے تھے۔لیکن آغا محمد علی شاہ اور گورنر راجہ جلال کی ملی بھگت سے میونسپل ایریا کو مہدی آباد سے لیکر پاری تک پھیلانے سے یہ علاقہ پہلے سے کہیں ذیادہ نظر انداز ہوگا اور اس علاقے کے حصے میں سوائے گندی ،ماحولیاتی آلودگی کے کچھ نہیں آئے گا۔
اس حوالے سے اہل علاقہ نے حکمت عملی تیار کرلی ہے اُنکا کہنا ہے جو علاقے پہلے دو یونین کونسل کے درمیان منقسم ہونے اور اس علاقے کے ساتھ سوتیلی ماں جیسا سلوک روا رکھنے کی وجہ سے معاشرتی ترقی میں بلکل پیچھے ہے اور اب میونسپل ایریا کو بھی سیاسی اثر روسوخ کی بنیاد پر تقسیم کرنے سے اس علاقے کے مسائل کم ہونے کے بجائے مزید بڑے گی ۔ اہل علاقہ نے پہلے مرحلے میں ضلعی انتظامیہ اس سیاسی بندربانٹ کو روکنے کیلئےمطالبہ کرنے اور ضلعی انتظامیہ کی جانب سے بھی انصاف نہ ملنے کی صورت میں کمشنر بلتستان،چیف سیکرٹیری اور فورس کمانڈر گلگت بلتستان کے سامنے اپنے خدشات رکھنے کا فیصلہ کیا ہے۔ کہا یہ جارہا ہے غاسنگ تا ہلال آباد سے ہٹ کر اوپر نیچے سطح پر میونسپل ایریا لے جانے کی صورت میں اہل علاقہ ہیڈکورارٹر کی تعمیرکا کام روکنے کیلئے بھی کسی قسم کی قربانی سے دریغ نہیں کرنے کیلئے تیار ہے۔
اہل علاقہ کا کہنا ہے مہدی آباد سے حال ہی میں تحریک انصاف میں شامل وزیر سلیم اور آغا محمد علی شاہ اور دیگر کی خواہش اورگورنر راجہ جلال کی خصوصی سفارش پر غاسنگ تا ہلال آبادکی سیاسی معاشی استحصالی کی جارہی ہے اور اس حوالے سے علاقے کے عوام میں شدید غم اورغصہ پایا جاتا ہے۔
حکومت کو چاہئے کہ اس حوالے سے سیاسی اثرروسوخ کے بجائے زمینی حقائق کو سامنے رکھتے ہوئے ضلع کھرمنگ میونسپل ایریا کا تعین کریں۔

  •  
  • 30
  •  
  •  
  •  
  •  
    30
    Shares

About TNN-GB

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*