تازہ ترین

فاٹا کو چاروں صوبوں کے ساتھ این ایف سی ایوارڈ میں شامل کرنے کا فیصلہ،گلگت بلتستان نظر انداز۔

اسلام آباد(تحریر نیوزنیٹ ورک) پاکستان تحریک انصاف کے رہنما اور وفاقی وزیر اطلاعات فواد چوہدری کا میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ ایف سی ایوارڈ میں تمام صوبوں سمیت فاٹا کو حصہ دینا ہو گا۔ میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ فاٹا کے انتظامی معاملات کو بھی دیکھنا ہے اس لیے کابینہ اجلاس میں سب سے پہلے فاٹا ریفارمز کا جائزہ لیا گیا۔ چیف جسٹس پشاور ہائی کورٹ سے فاٹا کے عدالتی نظام پر بات ہو چکی ہے۔
اُنہوں نے پریس کانفرنس میں گلگت بلتستان کا ذکر تک نہیں کیا حالانکہ گلگت بلتستان کے عوامی کی مرضی کے خلاف نافذ کردہ گلگت بلتستان آرڈ 2018 کے مطابق پاکستان کے تمام آئینی اداروں میں دیگر صوبوں کی طرح گلگت بلتستان کو بھی بطور مبصر کے نمائندگی دینا ہے۔ لیکن جب سے پاکستان تحریک انصاف کی حکومت آئی ہے گلگت بلتستان کا کسی بھی فورم پر نام تک نہیں لیا جارہا ہے۔
یاد رہے گزشتہ ہفتے مشترکہ مفاداتی کونسل میں بھی وزیر اعظم عمران خان نے گلگت بلتستان کو مکمل طور پر نظر انداز کرکے صرف چاروں صوبوں کے وزرائے اعلیٰ سے ملاقات کی تھی،حالانکہ پاکستان تحریک انصاف نے اپنے منشور میں گلگت بلتستان کی متنازعہ حیثیت اور مسلہ کشمیر کی اہمیت کو سامنے رکھتے ہوئے اس خطے کو داخلی خودمختاری دینے کا وعدہ کیا ہوا ہے لیکن اُن وعدوں پر عمل درآمد ہوتا دکھائی نہیں دے رہا۔
گلگت بلتستان کے مقامی تجزیہ نگاروں نے اس صورت حال کو گلگت بلتستان میں پاکستان تحریک انصاف کے قیادت کی ناکامی قرار دیا ہے کیونکہ اس وقت لوکل سطح پر قیادت عہدوں کیلئے ایک دوسرے کے خلاف لابنگ میں مصروف ہیں اور گورنر راجہ جلال سیاسی سوجھ بوجھ نہیں رکھتے لیکن اُنہیں مشاورت دینے والے اس وقت مفادات کیلئے راستے ہموار کررہے ہیں۔

  •  
  • 35
  •  
  •  
  •  
  •  
    35
    Shares

About TNN-Gilgit

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*