تازہ ترین

دیامر بھاشا ڈیم کے متاثرین سے حکومت سے بڑا مطالبہ کردیا۔

چلاس(تحریر نیوز نیٹ ورک) ضلع دیامر تھورسے تعلق رکھنے والے متاثرین دیامر بھاشا ڈیم متاثرین کی نئی آبادکاری مسلہ گھمبیر صورت حال اختیار کر رہا ہے، واپڈا کے ذمہ داران اور لوکل انتظامیہ نے تھور سے تعلق رکھنے والے دیامر بھاشا ڈیم کے متاثرین سےکئی بار کی ملاقاتوں میں اب تک کوئی مثبت نتیجہ سامنے نہیں آیا جو مستقبل قریب میں بڑے احتجاج کا سبب بن سکتا ہے۔
تھور سے تعلق رکھنے والے متاثرین کا کہنا ہے کہ وہ لوگ کسی بھی صورت معاوضے کی صورت میں نقد رقم لیکر اسلام آباد منتقل ہونے کیلئے تیار نہیں۔ متاثرین کا کہنا ہے کہ حکومت معاہدہ اسلام آباد 2010 پر عمل درآمد کو یقینی بناتے ہوئے اُنہیں معاہدے کے مطابق دیامر میں ہی ماڈل ولیجز کی قیام کو یقینی بنائیں۔
متاثرین نے اس حوالے سے ڈپٹی کمشنر دیامر ایک ایک خط لکھا ہے جس میں کہا ہے دیامر بھاشا ڈیم کے متاثرین اور حکومت کے درمیان 2010 میں اسلام آباد میں ایک معاہدہ ہوا تھا جس کے مطابق حکومت نے متاثرین کیلئے تین ماڈل ولیج ہربن داس،کینوداس اور تھک میں بنانے کا وعدہ کیا تھا جس سے اب منحرف نظر آرہی ہے۔ خط کے مطابق معاہدے میں متاثرین کو ایک کنال زمین اور 6 کنال زرعی زمین مفت دینے کا بھی وعدہ ہے لیکن اب اسلام آباد منتقل ہونے کو کہا جارہا ہے جو کہ معاہدے کی خلاف ورزی ہے اور ہم اس کیلئے بلکل بھی تیار نہیں۔

  •  
  • 3
  •  
  •  
  •  
  •  
    3
    Shares

About TNN-GB

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*