تازہ ترین

معروف سوشل ایکٹوسٹ حسنین رمل کے نوکری کی بحالی کیلئے سوشل میڈیا پر دھواں دار کمپئن شروع۔

گلگت ( ظفراقبال سے) گلگت بلتستان کے معروف سوشل ایکٹوسٹ اور قوم پرست رہنما نثار حسنین رمل جو محکمہ تعمیرات عامہ میں 16ویں اسکیل کے ملازم تھے۔جنہیں 2013 میں اُن کے نظریات کی وجہ سے اُنہیں نوکری سے معطل کیا گیا، اور 2016 میں مکمل طور پر نوکری سے برخاست کرکے تنخواہ بھی بند کردی گئی۔  اُنہیں بتایا گیا کہ اگر وہ اپنے نظرئے پر نظر ثانی کرتے ہیں تو نوکری کی بحالی کیلئے کوئی مسلہ نہیں لیکن اُنکا کہنا ہے کہ نوکری اور میرا نظریہ دو الگ زاوئے ہیں اگر میں اپنے نظرئے کی وجہ سے اپنی ذمہ داریوں میں کسی قسم کی کوتاہی کرتا، تو ادارے کا حق بنتا ہے کہ مجھے سزا دیں لیکن نوکری کیلئے اصولوں کی سودا بازی میرے لئے ممکن نہیں۔ اُنہیں پہلے فورتھ شیڈول میں ڈالا گیا پھر اگست 2017 میں میں ایک جعلی ایف آئی آر کے ذریعے گرفتار کرکے دس ماہ جیل میں گزارنے کے بعد گزشتہ ماہ اںہیں رہائی ملی۔ رہائی کے بعد بھی وہ اپنے نظرئے پر قائم ہیں اور اُنہوں نے محکمہ تعمیرات عامہ میں نوکری بحالی کیلئے کوشش کیا تو معلوم ہوا کہ اُنکا فائل ہی غائب کردیا ہے۔ حسنین رمل آج کل گلگت کے مقامی ہوٹل میں معمولی نوکری کرنے پر مجبور ہیں ،اور اُن کی یہ حالت دیکھ کراُن کے چاہنے والے سوشل میڈیا پر اُنکے نوکری کی بحالی کیلئے مہم شروع کردیا ہے جسے ہزاروں لوگوں نے شئیر کیا اور حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ حسنین رمل نے جب ادارتی سطح پر کوئی جرم نہیں کیا تو اُنکے نظرئے پر اُنہیں نوکری سے نکال دینا انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزی ہے۔سوشل میڈیا پر گلگت بلتستان میں انسانی حقوق کیلئے کام کرنے والے تنظیموں کے کردار پر بھی سوال اُٹھایا جارہا ہے۔ سوشل میڈیا پر ہیش ٹیگ کے ساتھ #حسنین کی نوکری بحال کرو کے ساتھ اُن سے اظہار ہمددی کیلئے کئی سو لوگ اپنے وال پر پوسٹ کرچُکے ہیں۔ اب دیکھنا یہ ہے کہ محکمہ تعمیرات عامہ گلگت بلتستان اس حوالے سےکیا مثبت اقدام اُٹھاتے ہیں۔ یادرہے حسنین رمل گلگت بلتستان کو اس خطے کی متازعے حیثیت کے مطابق حقوق کے حامی ہیں۔

  •  
  • 117
  •  
  •  
  •  
  •  
    117
    Shares

About TNN-ISB

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*