تازہ ترین

حقوق دیتے وقت قانونی مسائل کا بہانہ، جبکہ سوست میں ٹیکس لگانے کیلئےکوئی قانون نہیں۔آغاراحت حسین الحسینی

گلگت(چیف رپورٹر)حقوق دیتے وقت قوانین اڑے اجاتے ہیں جبکہ سوست میں ٹیکس لگاتے وقت کوئی قانون سامنے نہیں اتا ہیں سوست میں تاجروں کے مسائل حل کئے جائے اور اس عالمی بارڈر پر مقامی لوگوں کو سہولیات دی جائے یہ بات علامہ راحت حسین الحسینی نے جمعے کے خطبے سے خطاب کرتے ہوئے کہا انھوں نے کہا کہ گزشتہ ایک مدت سے گلگت بلتستان کے تاجروں کو تنگ کیا جارہا ہے جس کی وجہ سے نہ صرف تاجروں کا بلکہ ملک کا بھی نقصان ہورہا ہے جبکہ کئی دنوں تک یہ سوست پورٹ بند رہا لہذا صوبائی حکومت اور وفاقی حکومت تاجروں کے مسائل حل کرنے کے لئے فوری طور پر اقدامات کرے انھوں نے کہا کہ اس علاقے کو ہم نے خود اذاد کروا کر مملکت خداداد پاکستان کے ساتھ مل گئے ہیں ہم ملک کے لئے ہر قسم کی قربانی دینے کے لئے تیار ہیں لیکن اس علاقے کے جو مسائل ہیں ان کو ترجیحی بنیادوں پر ح ل کئے جائے۔محرم الحرام اتحاد بین المسلمین کا مہینہ ہے تمام مسلمانوں کو ملکراس عظیم مہینے میں زہرہ کے لال کو پرسہ دینا چاہیے حسنین سب کے لئے قابل احترام ہیں۔گزشتہ چند سالوں میں محرم کا حقیقی پیغام گلگت بلتستان کے تمام مسلمانوں کو پہنچا ہیں ہمیں ایک دوسروں کا احترام کرنا ہوگا اور ایک دوسرے کے عقیدے کو غلط سمجھنے کے بجائے اپس میں ملکر مشترکات کو لے کر اگے بڑھنا ہوگا تاکہ اس علاقے میں حقیقی اور پائیدار امن قائم ہوسکے امام حسین تمام مسلمانوں کے ہر فرقے کے لئے قابل احترام ہیں لہذا علمائے کرام بھی اس مقدس مہینے میں پیارو محبت کا درس دے اور تمام مسلمانوں کو دعوت دے اور امن قائم رکھتے ہوئے امام حسین کے فلسفہ امام حسین کو ہر فرد تک پہنچائے۔

  •  
  • 7
  •  
  •  
  •  
  •  
    7
    Shares

About admin

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*