تازہ ترین

گلگت بلتستان میں فوری طور پر گلگت بلتستان بورڈ کا قیام عمل میں لا یا جا ئے۔ عوامی ایکشن کمیٹی کا اعلامیہ۔

گلگت (  پ،ر)عوامی ایکشن کمیٹی کے چیئر مین مو لانا سلطان رئیس کی سر برا ہی میں مقامی ہو ٹل میں اجلا س منعقد ہوا اجلاس میں ایکشن کمیٹی کے جنرل سیکر یٹری پروفیسر سید یعصب الدین ، جنرل سیکر یٹری انجمن تاجران مسعود الر حمن تر جمان ایکشن کمیٹی محمد فاروق کے علاوہ ایگزیکٹیو باڈی کے ممبران نے شر کت کی ۔اجلاس سے خطاب کر تے ہوئے ایکشن کمیٹی کے چیئرمین مولانا سلطان رئیس نے کہا کہ گلگت بلتستان میں فوری طور پر گلگت بلتستان بورڈ کا قیام عمل میں لا یا جا ئے اور نومل روڈ کو توسیع کے ساتھ ری میٹلنگ کر کے حفاظتی اقدا مات کئے جا ئے تا کہ آئندہ کو ئی بھی حا دثہ رونما نہ ہو سکے ۔اجلاس میں متفقہ طور پر کہا گیا کہ کے آئی یو تا نومل تک روڈ کو فوری طور پر تعمیر کیا جا ئے اور اس تعمیر کو فوری شروع کیا جا ئے اور با قائدہ روڈ کے سا ئیڈوں پر حفا ظتی اقدا مات اٹھا ئیں جا ئیں اس سے قبل روڈ کو میٹل کیا گیا جو کہ ایک ماہ کے اندر اکھڑ گیا اور قومی بجٹ کو ٹیکہ لگا یا گیا غیر معیا ری کام ہو نے کے بدو لے آج نومل روڈ انتہا ئی خستہ حا لی کا شکا ر ہے او راس روڈ پر متعدد حادثات رونما ہو ئے ہیں اور گذشتہ روز بھی روڈ کٹا ہوا تھا جس کے بدولت ایک انتہا ئی افسوس ناک واقعہ رونماءہوا ۔مو لا نا سلطان رئیس ، سید یعصب الدین ، مسعود الر حمن اور محمد فاروق نے حکومت سے یہ مطا لبہ کیا ہے کہ گلگت بلتستان کا اپنا بورڈ کا قیام فوری عمل میں لا یا جا ئے اور فوری طور پر گلگت میں گرلز کالج کے مقام پر وومن یو نیورسٹی کا قیام عمل میں لا یا جا ئے تا خیری حر بے ہر گز قبول نہیں ہیں ۔انہوں نے کہا کہ وومن یونیوسرٹی کے حوالے سے حکومت ٹال مٹول کر نے کے بجا ئے فوری طور پر وومن یونیورسٹی کا قیام عمل میں لا ئیں اور اس کے لیئے گرلز کالج کے ساتھ دو عمارتیں خالی پڑی ہو ئی ہیں ان کو بھی ملاکر یو نیورسٹی بنا یا جا ئے ۔انہوں نے کہا کہ حکومت نے ان اہم ایشوز سے رو گردانی کی تو ایکشن کمیٹی حکومت کے لیئے مزید وقت نہیں دے گی اور اس مر تبہ ایکشن کمیٹی عوامی حقوق سمیت کرپشن کے خلاف بھی میدان میں اترے گی ۔

  • 3
  •  
  •  
  •  
  •  
    3
    Shares
  •  
    3
    Shares
  • 3
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  
  •  

About admin

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*