تازہ ترین

وزیر اعلیٰ کے خلاف عدم اعتماد تحریک آخری مرحلے میں داخل،متحدہ اپوزیشن نے پارلیمنٹ ہاوس کے سامنے احتجاج کا اعلان کردیا۔

گلگت(ڈسٹرک رپورٹر) گلگت بلتستان قانون ساز اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر اور دیگر اپوزیشن ممبران نے وزیر اعلیٰ حفیظ الرحمن کے خلاف عدم اعتماد کے آخری مرحلے میں داخل ہونے کا اعلان کردیا۔ گلگت پریس کلب میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے متحدہ اپوزیشن کے رہنماوں کا کہنا تھا کہ2018 کے اصلاحاتی پیکیج کے معاملے میں حفیظ الرحمٰن نے عوام سے دھوکہ کیاہے۔ لہذا اب مزید اُنہیں عوامی نمائندے کے طور پر برداشت نہیں کیا جاسکتا۔ اپوزیشن لیڈر کپٹن شفیع خان اور دیگر ممبران کا کہنا تھا کہ گلگت بلتستان صوبہ بنانا ممکن نہیں تو کشمیر طرز کا سیٹ اپ دیا جائے ۔ اُنہوں نے مزید کہا کہ مجوزہ اصلاحاتی پیکیج کے خلاف 19 اور 20 مئی کو تمام اپوزیشن ارکان پارلیمنٹ ہاؤس کے سامنے احتجاجی دھرنا دینگے ۔ انہوں نے کہا کہ ڈاکٹر اقبال کو علاقے سے محبت ہے تو اپنے قول کو ثابت کرے ، وزیر تعمیرات سمیت اسلام آباد راولپنڈی میں مقیم گلگت بلتستان کی عوام اپنے آئینی حق کے لئے پارلیمان ہاوس کے سامنے اپوزیشن اراکین کے دھرنے میں شامل ہو جائیں۔ ہم اُنہیں میڈیا کے سامنے دعوت عام دیتے ہیں ۔

About TNN-SKARDU

اپنی رائے کا اظہار کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*